خبرنامہ نمبر2256/2020
قلعہ عبداللہ12جون :۔آئی جی ایف سی کی ہدایت پر ضلع قلعہ عبداللہ کے مختلف علاقوں میں ٹڈی دل سے متاثرہ علاقوں میں فضائی سپرے آج اعلیٰ الصبح ہیلی کاپٹر کے ذریعے شروع کیا گیا۔جس کی نگرانی ایف سی 83 ونگ کے کمانڈر کرنل عمران اور محکمہ زراعت کے اہلکار کررہے ہیں۔سپرے ٹڈی دل سے متاثرہ کھڑی فصلوں اور باغات پر جاری ہے جو20 کلومیٹر پر محیط متاثرہ علاقے پر سپرے کا عمل مکمل کیا گیا محکمہ زراعت کے مطابق اس وقت پورے ضلع میں ٹڈی دل نے ہزاروں ایکڑ پر پھیلے باغات کو شدید نقصان پہنچایا ہے۔جن کے روک تھام کیلئے ہر ممکن اقدامات کئے جارہے ہیں ۔
﴾﴿﴾﴿﴾﴿
خبرنامہ نمبر2257/2020
زےارت 12جون :۔ڈپٹی کمشنر زےارت کیپٹن (ر)مہر اللہ بادےنی کی زےر صدارت مون سون بارشوں کے حوالے سے آفسران کا اجلا س منعقد ہوااجلاس میں اسسٹنٹ کمشنر زےارت لےاقت علی کاکڑ ،اسسٹنٹ کمشنر سنجاوی احسان انور لائن ڈےپارٹمنٹ کے آفسران نے شرکت کی اس موقع پر ڈپٹی کمشنر کو مون سون کے حوالے برےفنگ دی گئی اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے ڈپٹی کمشنر زےارت کیپٹن (ر)مہر اللہ بادےنی نے کہا کہ مون سون بارشوں کے ممکنہ خطرات اور نقصانات سے بچنے کے لےے تمام محکموں کو الرٹ رہنا ہوگا ،اس سلسلے میں اےرےگےشن آفس میں کنٹرول روم بھی قائم کردےا ہے عوام کسی بھی ہنگامی صورتحال میں مندرجہ زےل نمبر 920042پر رابطہ کرسکتے ہیں ۔
﴾﴿﴾﴿﴾﴿
خبرنامہ نمبر2258/2020
کوہلو12جون :۔ ڈپٹی کمشنر کوہلو عبداللہ خان کھوسہ کی خصوصی ہدایت پر محکمہ زراعت کی جانب سے ضلع میں انسداد ٹڈی دل کے تدارک کیلئے مہم جاری ہے گزشتہ ایک ماہ سے ضلع میں ٹڈی دل کا سپرے جاری ہے اب تک ماوند ،کاہان ،جنت علی ، کنل ،تمبو ،اوریانی ،لاسے زائی ،ملک زائی ،سردار شہر سمیت ضلع کے مختلف علاقوں میں سینکڑوں ایکڑ پر محیط فصلوں پر محکمہ زراعت کی جانب سے اسپرے کیا جاچکا ہے ڈپٹی ڈائریکٹر زراعت توسیعی سعید اللہ مری نے کہا ہے کہ ضلع میں ٹڈی دل کے خلاف اسپرے مہم جاری ہے ضلع کے دوردراز علاقوں سمیت نواحی و شہری علاقوں میں جہاں ٹڈی دل کے حملوں کی اطلاعات موصول ہورہی ہیںوہاں ٹیمیں پہنچ کر اسپرے کررہے ہیں محدود وسائل میں رہتے ہوئے ٹڈی دل کے خاتمے کےلئے کوشاں ہیںجبکہ ہماری ٹیمیں روزانہ کی بنیاد پر اسپرے کررہی ہیں اور بعض مقامات پر ٹڈی دل کو تلف کرنے کا عمل بھی جاری ہے ۔
﴾﴿﴾﴿﴾﴿
خبرنامہ نمبر2259/2020
کوئٹہ 12جون :۔ حکومت بلوچستان کی جانب سے صوبے کے پسماندہ علاقوں میں کھیلوں کے فروغ اور گراﺅنڈز کی تعمیر کیلئے مختلف پراجیکٹ پر کام جاری ہے سرکاری ذرائع کے مطابق وزیر اعلیٰ بلوچستان جام کمال کی خصوصی ہدایت پر سیکریٹری کھیل عمران گچکی کی ذاتی دلچسپی سے لسبیلہ میں اسپورٹس کے فروغ اور نوجوانوں کو مثبت سرگرمیوں کی جانب راغب کرنے کیلئے لسبیلہ کے پانچ میونسپل کمیٹی بیلہ ، اوتھل ، وندر ،گڈانی ،دریجی اور میونسپل کارپوریشن حب میں فٹسال اور جام میر غلام قادر فٹبال گراونڈ حب میں فٹبال اسٹیڈیم کی تعمیراتی منصوبوں پر عملدرآمد کیلئے کروڑوں روپے فنڈز ریلیز ہوچکے ہیں ایگزیکٹیو انجینئر سی اینڈ ڈبلیو ڈیپارٹمنٹ قاضی نورالحق بلوچ اور ڈپٹی کمشنر لسبیلہ ڈاکٹر حسن وقار چیمہ ترجیحی بنیادوں پر اسپورٹس پراجیکٹ پر عملدرآمد اورمانیٹرنگ مو ثر طریقے سے جاری رکھے ہوئے ہیں گزشتہ روز ایگزیکٹیو انجینئر سی اینڈ ڈبلیو قاضی نورالحق بلوچ نے لسبیلہ کی ماڈل ولیج دریجی میں دوکروڑ روپے سے زائد کی لاگت سے جاری منصوبے پر کام کی پیشرفت کا جائزہ لیا،اور متعلقہ انجینئرزکو احکامات بھی جاری کیں واضح رہے ،مزکورہ منصوبے پر عمدرآمد کیلئے رواں مالی سا ل کے دوران 25 لاکھ روپے کے فنڈز حکومت بلوچستان نے جاری کئے ہیں اور آئندہ سال کے بجٹ میں ان منصوبوں کی تکمیل کیلئے مطلوبہ فنڈز فراہم کئے جائیں گے۔
﴾﴿﴾﴿﴾﴿

خبرنامہ نمبر2260/2020
کوئٹہ12جون:۔محکمہ تعلقات عامہ آفیسرز ویلفیئر ایسوسی ایشن اور آل پاکستان کلرک اینڈ ٹیکنیکل اسٹاف ایسوسی ایشن کا ایک وفد آج یہاں سیکرٹری انفارمیشن شاہ عرفان غرشین اور ڈائریکٹر جنرل تعلقات عامہ محمد نعیم بازئی سے ملاقاتیں کیں اس موقع پر وفد نے سیکرٹری انفارمیشن اور ڈی جی تعلقات عامہ کو دفتر کے مسائل ، کرونا کے شکار ملازمین کی صحت، بونس تنخواہ اور خصوصا اسپیشل الاو¿نس کے حوالے سے آگاہ کیا۔ وفد نے بتایا کہ محکمہ تعلقات عامہ صوبائی حکومت کا انتہائی ضروری اور اہم محکمہ ہے جو 24 گھنٹے حکومتی پبلسٹی کے لئے کوشاں ہے صوبے میں ہنگامی حالات،سیلاب ،زلزے، دہشت گردی اور اب کرونا کے انتہائی خطرناک صورتحال میں بھی محکمے کے افسران اور اہلکار فرنٹ لائن پر حکومتی کارکردگی اور عوام میں شعور و آگاہی کے لیے خصوصی مہم جاری رکھے ہوئے ہیں اپنے فرائض کی ادائیگی کے دوران اب تک ہمارے دفتر کے 16 آفسران اور اہلکار کرونا وائرس کا شکار ہو چکے ہیں جبکہ ان کے خاندان کے دوسرے افراد شہید بھی ہوچکے ہیں اس کے باوجودہمارے افسران اور اہلکار اپنے فرائض منصبی دیانت داری اور خلوص نیت سے جاری رکھے ہوئے ہیں انہوں نے کہا کہ افسوس ناک امر یہ ہے کہ ہمارے دفتر کے افسران اور اہلکاروں کی تنخواہ انتہائی قلیل ہے اور وہ اپنے خاندان کی ضروریات بھی پورا نہیں کر سکتے لہذا اس سلسلے میں ملازمین کا جائز مطالبہ اسپیشل الاو¿نس کی منظوری بےحد ضروری ہے جس سے ہمارے افسران کی حوصلہ افزائی کے ساتھ ساتھ ان کی مالی مشکلات میں بھی کمی آئے گی۔ اس موقع پر سیکرٹری انفارمیشن اور ڈائریکٹر جنرل تعلقات عامہ نے وفد کو ان کے جائز مطالبہ اسپیشل الاو¿نس کے حصول اور دیگر مسائل کے حل کے حوالے سے یقین دہانی کرائی جس پر وفد نے ان کا شکریہ ادا کیا۔
﴾﴿﴾﴿﴾﴿
خبرنامہ نمبر2261/2020
لورالائی ۔ وزیراعلی بلوچستان جام کمال علیانی بلوچستان کی ترقی کیلئے دن رات کو شیشکررہے ہیں اور تما م محکموں کی بہتری کیلئے ہرممکن اقدامات کیے جارہے ہیں محکمہ لائیوسٹاک مالداری کے شعبے کی بہتری کیلئے تمام اقدامات اُٹھا رہاہے اور اس کیلئے تمام وسائل بروئے کار لارہا ہے بلوچستان میں محکمہ لائیوسٹاک کا شعبہ ریڑھ کی ہڈی کی حیثیت رکھتا ہے ان خیالات کا اظہار صوبائی وزیر صنعت و حرفت حاجی محمد خان طور اوتمانخیل نے گذشتہ روز محکمہ لائیوسٹاک کی جانب سے گورنمنٹ پولٹری فارم میں اپنی اور محکمہ لائیوسٹاک کی کوششوں سے لورالائی میں خوشحال پاکستان منصوبہ برائے گھریلو مرغبانی کے سلسلے میں عوام میں مرغیوں کی تقسیم کے موقع پر خطاب میں کیا اس موقع پر ڈپٹی کمشنر لورالائی کیپٹن (ر) فیاض علی پراجیکٹ ڈائریکٹر ڈاکٹر کامران ڈپٹی ڈائریکٹرڈاکٹر محمد نعیم اوتمانخیل ڈویژنل ڈائریکٹر لائیوسٹاک بہاﺅالحق مندوخیل محکمہ لائیوسٹاک کے ڈاکٹر ز لائیوسٹاک ورکر یونین نصیب خان ناصر ملک شراف الدین کاکڑ جانان کاکڑ سردار یحیی خان جوگیزئی ملک فیض مہترزئی لورالائی پریس کلب کے نمائندوں اور عوام کی کیثر تعداد موجود تھی صوبائی وزیر صنعت و حرفت حاجی محمد خان طور اوتمانخیل نے کہا کہ وزیراعظم عمران خان مرغبانی پروگرام کا مقصد گھریلو سطح پر عوام کی کفالت کرنا ہے تاکہ غریب عوام خصوصا خواتین مرغیاں پال کر اپنا گزر بسر کرسکیں اور ان کے معاشی مسائل حل ہوسکیں گے انہوںنے کہا کہ اس پروگرام سے ملکی معیشت پر گہرے اثرات مرتب ہونگے انہوںنے کہا کہ عوام خصوصا خواتین کو چاہیے کہ و ہ وزیر اعظم کے مرغبانی پروگرام سے بھر پور استفاد ہ حاصل کریں یہ مرغیا ں رعایتی نرخوں پر لوگوں کو فراہم کی جارہی ہیں جن میں نو مرغیاں اور ایک مرغ شامل ہے انہوںنے کہا کہ یہ پروگرام غربت کے خاتمے میں اہم کردار ادا کرے گا لورالائی سمیت تمام بلوچستان کی اسی فیصد آبادی کا انحصار گلہ بانی پر ہے اورمالداری کے شعبہ بلوچستان کے لوگوں کی زند گی کیلئے بہت زیادہ اہمیت ہے کا حامل ہے صوبائی حکومت بلوچستان میں مالداری کے شعبے کی ترقی اور مویشی بانوں کی فلاح و بہبود کیلئے محکمہ لائیوسٹاک کو تمام وسائل اور سہولیات فراہم کررہی ہے انہوںنے محکمہ لائیوسٹاک کے عملے کو تاکید کی کہ لورالائی کے مالداروں کو مکمل ریلیف کی فراہمی کے ساتھ ساتھ ان کے جانوروں کی صحت اور حفاظت کیلئے ویکسینشن اور علاج معالجے کیلئے خصوصی کیمپ بھی لگائے جائیں انہوںنے کہا کہ لائیوسٹاک کے شعبے کی ترقی مضبوطی اور بہتری سے صوبہ بلوچستان اس کے شہری دیہی آبادی کی خوشحالی اور ملک کی معیشت میں بھی بہتری آئے گی ڈپٹی ڈائریکٹر لائیوسٹاک لورالائی ڈاکٹر محمد نعیم خان اوتمانخیل نے کہا کہ آج تقریباًدوہزار افرادمیں یہ مرغیاں تقسیم کی جارہی ہیں اور یہ سلسلہ لورالائی شہر اور اس کی تمام یونین کونسلز میں مرحلہ وار شروع کیا جائے گا اور عوام اور خصوصادیہی خواتین کو چاہیے کہ وہ اس مرغبانی پروگرام سے بھر پوراستفادہ حاصل کریں انہوںنے کہا کہ اس مہم کے دوران بیس ہزار مرغیوں کی تقسیم کا ٹارگٹ رکھا گیا ہے ڈپٹی ڈائریکٹرڈاکٹر محمد نعیم خان اوتمانخیل نے کہا کہ محکمہ لائیوسٹاک بھر پور کوشش کررہاہے کہ اوراپنے دستیاب وسائل میں رہ کرمالداروں کو ہرممکن سہولیات فراہم کررہاہے انہوںنے مویشوں کی پیداواری صلاحیت کو بڑھاکر خوراک کی کمی اور روزگار کے نئے مواقعے فراہم کیے جاسکتے ہیں بیماریوں سے بچانے کیلئے علاج معالجے کے ساتھ ساتھ جانوروں کی دیکسین اور ان کے علاج کیلئے مالداروں کو ادویات بھی فراہم کی جارہی ہیں۔
﴾﴿﴾﴿﴾﴿

خبرنامہ نمبر2262/2020
کوئٹہ 12 جون :۔ سریاب روڈ پر کسٹم کے قریب ٹرانسفارمر تیل سے بھرا ٹرک موڑ لیتے ہوئے الٹنے کی وجہ سے آگ بھڑک اٹھی تھی جسے ایڈمنسٹریٹر طارق جاوید مینگل کی فوری ہدایات پر میٹروپولیٹن شعبہ فائر برگیڈ کے جوانوں نے چیف فائر آفیسر عبدالحق اچکزئی کی نگرانی میں بروقت کارروائی کرتے ہوئے آگ کو رہائشی آبادی تک پہنچنے سے روکا اور جلد قابو پایا جس سے آگ کی لپیٹ میں صرف چند دوکانیں آئیں ، میٹروپولیٹن کا عملہ جاے وقوعہ پر 2 دن کام جاری رکھا چیف فائر آفیسر عبدالحق اچکزئی کی سربراہی میں چیف سینیٹیشن آفیسر انور لہڑی نے عملہ صفائی کی مدد سے سڑک پر پھیلے ہوئے ٹرانسفارمر تیل پر خاکہ اور زیرو بجری ڈلوایا جس سے عوام الناس کو آمد و رفت میں آسانی میسر ہوئی اور دوبارہ آگ بھڑک اٹھنے کا خطرہ بھی ٹل گیا، بعد ازاں گزشتہ روز چیف سینیٹیشن آفیسر انور لہڑی کی نگرانی میں عملہ صفائی نے موقع کی صفائی کی اور جلنے والا تعمیراتی ملبہ و دیگر کچرے کو اسسٹنٹ انجینئر میکینیکل سرور زہری کی ٹیم نے ڈمپر اور لوڈر کی مدد سے اٹھا کر ٹھکانے لگایا۔
﴾﴿﴾﴿﴾﴿

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Post comment