HomeNews30.11.2019 Saturday (File No.1)

30.11.2019 Saturday (File No.1)

30.11.2019 Saturday (File No.1)

خبرنامہ نمبر4088/2019
کوئٹہ 30نومبر: ۔گورنربلوچستان امان اللہ خان یاسین زئی نے کہا ہےکہ اعلیٰ تعلیمی اداروں میں نظم وضبط اور قواعد ضو ابط پر عملدرآمد کو ہر صورت میں یقینی بنایا جائیگا۔انہوں نے کہا کہ بلوچستان یونیورسٹی اف میڈیکل اینڈ ہیلتھ سائنسز کے طلباءوطالبات ہمارے بچوں کی طرح ہیں اور ا±ن کو ہاسٹلز فراہم کرنے کے علاوہ ودیگر درپیش مسائل کا پائیدار کا حل نکالنا ہماری آولین ترجیح ہے۔بولان میڈیکل یونیورسٹی کے دورے کے موقع پر یونیورسٹی میں ضروری سہولیات اور صحت مند تعلیمی ماحول کے حوالے سے درپیش مشکلات دریافت کی اور فوری طور پر تمام شکایات کا ازالہ کرنے کی ہدایت کی۔یہ بات انہوں نے ہفتہ کے روز بولان یونیورسٹی آف میڈیکل اینڈ ہیلتھ سائنسز کے دورے کے موقع پر کہی۔صوبائی وزیر صحت میر نصیب اللہ مری اور وائس چانسلر پروفیسر ڈاکٹر نقیب اللہ اچکزئی بھی گورنر بلوچستان کے ہمراہ تھے۔اس موقع پر گورنر نے کہا کہ ہاسٹلوں کو صرف ریگولر اسٹوڈنٹس اور سرکاری رہائش گاہ کو متعلقہ ملازمین کو میرٹ کی بنیاد پر آلاٹ کرنے کی خصوصی ہدایت کی۔ا±نہوں نے کہاکہ گرلز ہاسٹلو ں کو غیر قانونی قابضین سے پاک رکھنا ضروری ہے اور یہی میرے دورے کا مقصد ہے۔ گورنر نے وائس چانسلر اورا±ن کی پوری ٹیم کی کوششوں کو لایق تحسین قراردیا۔یہاں صرف یونیورسٹی کی ریگولر طلباءوطالبا ت کی رہائش کو یقینی بنایا جائے۔ انہوں نے صوبائی وزیر صحت پر زور دیا کہ یہاں پر گرلز ہاسٹلوں میں رہنے والے پی جی ڈاکٹرز (PG Doctors) کے رہائش کے لئے متبادل بندوبست کیا جائے تاکہ ریگولر اسٹوڈانٹس کا قیمتی وقت اور توانائی ضایع نہ ہو. صوبائی وزیر صحت نے گورنر بلوچستان کو یقین دلایا کے بہت جلد تمام متعلقہ محکموں کی مشاورت سے پی جی ڈاکٹرز کیلئے متبادل انتظام کیا جائے گا.#
﴾﴿﴾﴿﴾﴿
خبرنامہ نمبر4089/2019
کوئٹہ 30نومبر :۔چیف جسٹس بلوچستان ہائی کورٹ جسٹس جمال خان مندوخیل نے کہا ہے کہ عوام کو انصاف کی بروقت اور ان کی دہلیز پر فراہمی اولین ترجیح ہے ، انصاف کی فوری فراہمی کے لیے عدلیہ سمیت صوبے کے تمام اداروں کو اپنا کردار ادا کرنا ہوگا، ان خیالات کا اظہار انہوں نے سریاب میں ڈسٹرکٹ اینڈ سیشنز کورٹ کی عمارت کے افتتاح کے موقع پر منعقدہ تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کیا، تقریب میں رکن قومی اسمبلی آغا حسن بلوچ، اراکین صوبائی اسمبلی نصیر احمد شاہوانی، احمد نواز بلوچ، زینت شاہوانی، سینئر ججز جسٹس ہاشم خان کاکڑ، جسٹس محمد اعجاز سواتی،جسٹس کامران خان ملاخیل،جسٹس نزیر احمد لانگو،جسٹس ظہیر الدین کاکڑ،جسٹس عبداللہ بلوچ،جسٹس روزی خان بڑیچ، ڈی آئی جی پولیس عبدالرزاق چیمہ، رجسٹرار بلوچستان ہائی کورٹ راشد محمود ، ایڈووکیٹ جنرل بلوچستان ارباب محمد بابر،ممبر پاکستان بار کونسل کامران مرتضیٰ، ضلعی انتظامیہ ، وکلائ اور سیاسی و سماجی شخصیات کی بڑی تعداد نے شرکت کی، تقریب سے چیف جسٹس جمال خان مندوخیل نے اپنے خطاب میں کہا کہ صوبے کے دیگر اضلاع کی نسبت کوئٹہ اور خاص طور پر سریاب جہاں کی آبادی تقریباً دس لاکھ افراد پر مشتمل ہے میں مقدمات کی تعداد زیادہ ہے، جس کے پیش نظر یہاں ڈسٹرکٹ اینڈ سیشنز کورٹ کا قیام عمل میںلایا گیا تاکہ سریاب کے عوام کو بھی ان کی دہلیز پر انصاف کی فراہمی ممکن ہو سکے، انہوں نے کہا کہ بدقسمتی سے گذشتہ ادوار میں مختلف واقعات رونما ہونے کی وجہ سے کوئٹہ اور خاص طور پر سریاب کے علاقے کے بارے میں یہ تاثر پایا جاتا تھا کہ یہاں پر امن و امان کی صورتحال مخدوش ہے، لیکن آج ناصرف سریاب بلکہ کوئٹہ اور پورا بلوچستان امن کا گہوارہ بن چکا ہے اور سیکورٹی فورسز اور عوام کی قربانیوں کا ثمر ہے کہ آج یہاں ہم اس شیشنز کورٹ کا افتتاح کر رہے ہیں، انہوں نے کہا کہ سریاب سیشنز کورٹ میں 7تھانوں کے مقدمات کی پیروی کی جائے گی اور عوام کے مختلف کیسسز کو نمٹانے کے لیے تمام ضروری سہولیات میسر ہونگی۔ جبکہ وکلا ءحضرات بھی روزانہ کی بنیاد پر کورٹ میں موجود ہونگے، انہوں نے کہا کہ کورٹ میں عوام کے ریلیف کے لیے ہفتہ میں دو دن ڈپٹی کمشنر کوئٹہ اور دو اسسٹنٹ کمشنرز بھی موجود رہیں گے، چیف جسٹس نے مزید کہا کہ بار اور بینچ لازم و ملزوم ہیں لوگوں کو سستے اور فوری انصاف کی فراہمی کے لیے بار اور بینچ کا باہمی کردار نہایت اہمیت کا حامل ہے، انہوں نے کہا کہ ماضی میں وکالت کے شعبہ سے وابستہ افراد کے مابین استاد اور شاگرد کا ایک رشتہ ہوتا تھا اور جونیئرز اپنے سینئرز کا بہت احترام کرتے تھے لہذا اس شعبہ کا وقار برقراررکھنے کے لیے ہمیں پرانی روایات کو واپس لانا ہوگا۔ انہوں نے کہا کہ عدلیہ کا کام ناانصافی دور کر کے عوام کو ان کی دہلیز پر انصاف کی فراہمی کو یقینی بنانا ہے لوگ مجبوراً عدالت کا رخ کرتے ہیں ، ہمیں عدلیہ کے ساتھ ساتھ اپنے اداروںکو بھی مضبوط کرنا ہوگا کیونکہ اگر ادارے مضبوط ہوں اور عوام کو ہر سطح پر انصاف میسر ہو تو وہ کیوں عدالت آئیں گے۔ انہوں نے کہا کہ وکلاءکے جائز مسائل کو دستیاب وسائل میں رہتے ہوئے حل کرنے کے لیے کوشاں ہیں اور اس سلسلے میں وکلاءحضرات ہمیں ضرور اپنے درپیش مسائل سے آگاہ کریں۔
﴾﴿﴾﴿﴾﴿
خبرنامہ نمبر4090/2019
پشےن 30نومبر :۔ڈپٹی انسپکٹر جنرل آف پولیس کوئٹہ عبدالرزاق چیمہ نے کہا ہے کہ قیام امن میں پولیس اور لیویز سمیت تمام سیکورٹی فورس کاکردار اہم ہے الحمد اللہ صوبہ بلوچستان میں امن وامان کی صورتحال ماضی کی نسبت کافی بہترہے ۔ پولیس شہری جبکہ لیویز دیہی علاقوں میںمعاشرتی برائیوں کے خاتمے کیلئے یکساں طور پر کارروائیاں کررہی ہے یہ بات انہوں نے گزشتہ روز پشےن کے مختصر دورے کے موقع پر پولیس لائن میں منعقدہ دربار اور پروموش پانے والے اہلکاروں سے خطاب کرتے ہوئے کہی انہوں نے کہا کہ گزشتہ دنوں لیویز اور پولیس نے ملکر پشےن میں مشکوک موٹرسائیکل میں نصب بم کو ناکارہ بناکر دہشتگردی کا منصوبہ ناکام بنادیا ۔ انہوں نے کہا کہ پولیس دہشتگردی کیخلاف منظم انداز میں کارروائیاں کررہی ہے صوبے میں اسٹریٹ کرائمز کی سرکوبی کیلئے پولیس سمیت تمام سیکورٹی فورسز مکمل طور پر متحرک ہے یہ تاثر غلط ہے کہ ہم فلاں ڈسٹرکٹ کی نفری ہیں ہمیں کوئٹہ یا دیگر اضلاع میں کیوں طلب کیا گیا ہے امن وامان کی بحالی کیلئے جہاں ضرورت پڑی وہاں جاکرپولیس کام کرئیگی پولیس کے جوانوں کو بہتر اور ضروری سہولیات کی فراہمی کیلئے اقدامات کئے جارہے ہیں بلوچستان قبائلی صوبہ ہے جہاں تمام تر معاملات قبائلی رسم و رواج کے ذریعے حل کرائے جاتے ہیں جو کہ نیک شگون ہے پشےن پرانا تھانہ کے قریب سے بائی پاس کی تعمیر کے حوالے سے ان کا کہنا تھا کہ رکن صوبائی اسمبلی اور ڈپٹی کمشنر سے اس ضمن میں بات کرکے مسئلہ حل کردیا گیا ہے۔محکمہ پولیس میں پروموشن کیسز التوا ءکے شکار نہیں ہے صوبے میں پولیس کی قربانیاں کسی سے ڈھکی چھپی نہیں پولیس عوام کے ساتھ عزت و احترام سے پیش آئے بہادر انسان وہ ہے جو اپنے غصے کو پی جائے رشوت ایک ناسور ہے جس سے انسان اپنی عزت کھو بیٹھتا ہے ظالم کو ظلم سے روکنا پولیس کی ذمہ داری ہے انہوں نے کہا کہ پولیس امر بالمعروف اور نہی عن المنکر پر عمل درآمد کو یقینی بنائے لوگوں کو نیکیوں کا حکم اور برائیوں سے روکنے کی تلقین کرے انہوں نے کہا کہ ماضی میں صوبائی دارلحکومت کوئٹہ میں دہشتگردی کے واقعات میں بدستور اضافہ ہوتا جارہا تھا جس پر الحمد اللہ پولیس ،ایف سی اور لیویز سمیت تمام سیکورٹی فورسز نے قابو پالیا انہوں نے کہا کہ ڈسٹرکٹ پشےن امن وامان کے حوالے سے مثالی ضلع ہے ۔اس موقع پر ڈپٹی کمشنر قائم لاشاری نے کہا کہ لیویز وار پولیس میں کوئی تفریق نہیں ڈسٹرکٹ کے قیام امن کیلئے لیویز اور پولیس کی قربانیوں کو فراموش نہیں کیا جاسکتا صوبائی حکومت لیویز اور پولیس کو جد ید آلات اور مراعات سے لیس کرنے کیلئے اقدامات کررہی ہے انہوں نے کہا کہ ڈسٹرکٹ میں لیویز کی تمام چیک پوسٹیں فعال ہیں پشےن میں امن کی صورتحال کافی بہتر ہے ہماری لیویز اور پولیس کسی بھی ناخوشگوار واقع سے نمٹنے کیلئے بھر پور صلاحیت رکھتی ہے ۔دربار سے سینئر سپرنٹنڈنٹ آف پولیس محمد ایوب خان اچکزئی نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ شہر میں امن وامان کی صورتحال کو مزید بہتر بنانے کیلئے پولیس اور لیویز مشترکہ جدوجہد کررہی ہے ڈسٹرکٹ میں جعلی نمبر پلیٹس اور سیاہ شیشوں والی گاڑیوں کیخلاف پولیس کارروائی کررہی ہے انہوں نے کہا کہ شہر میں امن وامان کی صوتحال پر کوئی سمجھوتہ نہیں کریں گے شہر اور اطراف سے منشیات اور جرائم پیشہ عناصر کی سرکوبی کیلئے لیویز اور پولیس دونوں بہتر کام کررہی ہے ۔
﴾﴿﴾﴿﴾﴿
خبرنامہ نمبر4091/2019
پشین 30نومبر :۔ڈپٹی کمشنر قائم لاشاری نے کہا کہ تحفظ عامہ کی صورتحال مثالی ہے ضلع کے پرامن ماحول کو خراب کرنے کی کسی کو اجازت نہیں دینگے پشین کے تمام قبائل و اقوام ہم میں سے ہیں لیویز ریکارڈ اور چیک اینڈ بیلنس کے لئے Dc Office District Pishin Government Of Balochistan کے نام سے باقاعدہ طور پر ویب سائٹ بنادیا گیا ہے جس میں 2010سے لیکر2019تک کے تمام ریکارڈ شامل ہونگے اور ساتھ ہی لوگوں کو لیویز کارکردگی سے متعلق لمحہ بہ لمحہ فوری آگاہی حاصل ہوگی لیویز کو جدید اسلحے اور مراعات کی فراہمی اولین ترجیح ہے گزشتہ روز پشین میں بم کو ناکارہ بنانے اور شہر کو تباہی سے بچانے میں لیویز کا کردار اہم ہے پشین کے لیویز میری جسم کا حصہ ہے بلوچستان میں امن وامان کے قیام اور قانون کے عملداری کی بحالی کیلئے لیویز فورس کا کردار ہمیشہ نمایاں رہا ہے صوبائی حکومت لیویز فورس کو دور حاضر کے تقاضوں سے ہم آہنگ بنانے کیلئے ،لیویز کی استعداد کار بڑھانے جدید آلات سے لیس کرنے اور پیشہ وارانہ مہارت میں بہتری لانے کیلئے اقدامات کررہی ہے انہوں نے کہا کہ عوامی شکایات اور انکا فوری آزالہ اولین ترجیح ہے ڈسٹرکٹ کے عوام کے جائز شکایات کیلئے انکے دروازے ہمیشہ کھولے ہیں آن لائن ایف آئی آر درج کرنے کے سسٹم پر کام جاری ہے اسٹریٹ کرائمز اور اغواءبرائے تاوان جیسی وارداتوں کا قلع قمع کردیا گیا ہے انہوں نے کہا کہ ڈسٹرکٹ کے سرکاری محکموں میں میرٹ کی پامالی ہر گز برداشت نہیں کریں گے پشین کے مضافات میں عوام کے جان ومال کی مکمل تحفظ کو برقرار رکھنے میں لیویز کی خدمات کسی سے ڈھکی چھپی نہیں وہ پشین میں لیویز آفیسران کو مزکورہ ویب سائٹ سے متعلق بریفنگ دے رہے تھے اس موقع اے ڈی سی (جنرل ) امین اللہ ناصر ،اسسٹنٹ کمشنر پشےن محمد عارف زرکون، اسسٹنٹ کمشنر خانوزئی سعید محمد دمڑ، اسسٹنٹ کمشنر حرمزئی محمد وارث جاموٹ، اسسٹنٹ کمشنر برشور اور رسالدار میجر لیویز علی محمد ترین بھی موجود تھے۔
﴾﴿﴾﴿﴾﴿
خبرنامہ نمبر4092/2019
کوئٹہ 30نومبر :۔تعلےمی نظام کی بہتری کے لےے سب کواپنا کردار ادا کرنا ہوگا ،موجودہ صدی علم وہنر کی صدی ہے ،معےاری تعلےم کو فروغ دےکر ہی ہم قابل فخر مقام حاصل کرسکتے ہیں ان خےالات کا اظہار صوبائی وزےر پی اےچ ای وواساحاجی نورمحمد خان دمڑنے کوئٹہ میں سردار زادہ اسامہ ترےن ،راز محمد دمڑ ،عثمان شاہ اور نجم خان کی دعوت پر الائیڈپبلک اسکول کے دورے کے موقع پر کےا،صوبائی وزےر نے اسکول کے مختلف شعبوں کا معائنہ کےا جبکہ سردار اسامہ ترےن نے اسکول کے مسائل سے انہیں آگاہ کےا ،صوبائی وزےر نے ےقےن دہانی کراتے ہوئے کہا کہ پانی سمےت تمام مسائل کو ترجےحی بنےادوں پر حل کرےںگے ۔صوبائی وزےر حاجی نور محمد دمڑ نے مزید کہاکہ بلوچستان میں تعلےم کے حوالے سے موثر فےصلے کررہے ہیں ہم ہر بچہ اسکول میں ہراستاد کلاس میں دےکھنا شاہتے ہیں ،غےر فعال اسکولوں کو فعال کرےں گے ۔انہوں نے کہا اُستاد کامعاشرے میں اونچا مقام ہے وہ اپنے فرائض اےمانداری سے ادا کرے، غےر حاضر اساتذہ کی ہمیں کوئی ضرورت نہیں ۔ انہوں نے کہا کہ سرکاری تعلےمی اداروں کے ساتھ پرائےوٹ تعلےمی اداروں کا بھی معےاری تعلےم کے فروغ کے حوالے سے کردار نظرا نداز نہیں کےا جاسکتا۔انہوں نے کہا کہ ہم اپنے بچوں کو اےک بہترےن ماحول فراہم کررہے ہیں ۔درےں اثنا ءصوبائی وزےر حاجی نور محمد دمڑ کو ےادگاری شےلڈ بھی پےش کی گئی انہوں نے راز محمد دمڑ ،عثمان شاہ ،نجم خان کی طرف سے دئیے گئے عشائیہ میں بھی شرکت کی ۔
﴾﴿﴾﴿﴾﴿
خبرنامہ نمبر4093/2019
کوئٹہ 30نومبر :۔صوبائی وزیر خزانہ ظہور احمدبلیدی نے مائیکروسافٹ کے مالک بل گیٹس کی پاکستان میں پولیوسکے خاتمے کیلئے 1.08ملین ڈالر کی حالیہ قسط ی فراہمی کو سر ا ہتے ہوئے کہا ہے کہ پاکستانی عوام بل گیٹس ودیگر مخیر حضر ات اور بین الاقوامی اداروں سے پاکستان کو دیگر مہلک بیماریوں سے پاک کرنے کیلئے اسی طرح کے جز بے اور تعاون کا مظا ہرہ کرنے کی اُمید رکھتی ہے کیونکہ دُکھی انسانیت کی خدمت کرنا تمام تر مذہبی ،قومی اور رنگ ونسل کی امتیاز سے بالا تر ہو تی ہے صوبائی وزیر نے کہاکہ پولیو کے ساتھ ساتھ دیگر مہلک بیماریوں جیساکہ کینسر ،یر قان ،ذیابیطس ،دل کے امراض ذہنی تناواور اس طرح کی دوسرے بیماریوں سے سال میں لاکھوں کی تعداد میں لوگوں کی موت واقع ہوتی ہے ۔ان اموت کی تنا سب کو کم کرنے کیلئے ضروری ہے کہ بین الا قوامی ادارے پاکستان کے ہاتھ مضبوط کرے صوبائی وزیرنے کہاکہ پاکستان میں غربت ،نا خو اندگی ،حفظا ن صحت کی سہولیات کی کمی ،غذائی قلت اور دیگر عورحل مثالی علاج ومعالجے کی سہولیات کی فراہمی میں رکاوٹ ہیںحکومت ان عوامل کے تد ارک کیلئے کوشاں ہے لیکن تن تنہا حکومت یہ ذمہ داری نبھانہیں سکتی اس کیلئے بین الاقومی اداروں کے تعاون کی اشد ضرورت ہے جس سے لوگوں کے ذہن میں پولیو سے متعلق پائے جانے والا بہام بھی دور ہوگا ۔
﴾﴿﴾﴿﴾﴿
خبرنا مہ نمبر4094/2019
کوئٹہ 30نومبر :۔ترجمان بلوچستان حکومت لیاقت شاہوانی نے بلوچستان کے سینئر صحافی شہزادہ ذوالفقار کے اے پی این ایس کا مرکز ی صدر منتخب ہونے پر انہیں دلی مبارکباد ی ہے ، اپنے بیان میںانہیں مبارکباد دیتے ہوئے ترجمان نے کہا ہے کہ اُن کے صحافیوں کے ایک اعلیٰ ترین فورم کا سربراہ منتخب ہونے سے صوبے کے صحا فیوں کے مسائل کے حل میں مدد ملے گی اور حکومت وصحا فیوں کے درمیان قائم خو شگوار تعلقات میںمزید پختگی آئے گی انہوں نے کہا کہ فورم کے ذریعے ملک بر اور خصوصاًصوبے کے صحافیوں کے مسائل اور عوامی مسائل کو قومی سطح پر اُجاگر کرنے میں مدد ملے گی جبکہ اس سے صحا فت کے شعبے میں مزید بہتری اور نکھا ر آئے گا نیز صوبائی حکومت کے ساتھ صوبے کے صحا فیوں وپر یس کے تعلقات کے بہترہونے سے صوبے کے مسائل کی نشا ندہی اور ا ُن کے حل میں بھی مدد ملے گی۔
﴾﴿﴾﴿﴾﴿

Share With:
Rate This Article
No Comments

Leave A Comment