HomeNews26-02-2019 TUESDAY (FILE NO.1)

26-02-2019 TUESDAY (FILE NO.1)

26-02-2019 TUESDAY (FILE NO.1)

خبر نامہ نمبر 708/2019
کوئٹہ26فروری:۔وزیراعلیٰ بلوچستان جام کمال خان نے مختلف ہسپتالوں کو دی جانے والی حکومتی گرانٹ کے طریقہ کار کو مزید بہتر بنانے کی ہدایت کرتے ہوئے کہا ہے کہ گرانٹ کے اجراء میں ہسپتالوں کی کارکردگی کو بھی پیش نظر رکھا جائے گا، ان خیالات کااظہار چلڈرن ہسپتال کوئٹہ کے سی ای او ڈاکٹر عبداللہ جان جعفر سے بات چیت کرتے ہوئے کیا جنہوں نے منگل کے روز ان سے یہاں ملاقات کی اور ہسپتال کی کارکردگی کے ساتھ ساتھ درپیش مسائل کے بارے میں بھی آگاہ کیا، وزیراعلیٰ نے کہا کہ حکومت صحت کے شعبہ کو بہتر بناکر عوام کو علاج معالجہ کی جدید سہولتوں کی فراہمی کی پالیسی پر عملدرآمد کررہی ہے، چلڈرن ہسپتال کوئٹہ ، بچوں کے علاج معالجہ میں اہم کردار کا حامل ہے تاہم اس کی کارکردگی اور استعداد کار میں اضافہ کی وسیع گنجائش موجود ہے، ہسپتال میں نجی شعبہ سے کنسلٹنٹ اور اسپیشلسٹ کی خدمات حاصل کرکے نہ صرف علاج ومعالجہ کی سہولتوں میں کو بہتربنایاجاسکتا ہے بلکہ وسائل میں اضافہ کے ذریعہ اسے ایک خودانحصار ادارہ بھی بنایا جاسکتا ہے، انہوں نے کہا کہ صوبائی حکومت ہسپتال کی گرانٹ میں اضافہ اور ایکسرے ،ایکو، ایم آر آئی اور الٹراساؤنڈ کی مشینری فراہم کرنے کے لئے تیار ہے تاکہ بچوں کو علاج کی بہتر سہولتوں کی فراہمی ممکن ہوسکے تاہم ادارے کو اپنی پالیسی میں بہتری لانا ہوگی اور ہسپتال کے وسائل میں اضافہ کے لئے ٹھوس اقدامات اٹھانا ہوں گے۔
()()()
خبر نامہ نمبر 709/2019
کوئٹہ26فروری:۔وزیراعلیٰ بلوچستان جام کمال خان نے سرکاری شعبہ کے ہسپتالوں سے حاصل ہونے والی آمدنی کو انہی ہسپتالوں پر خرچ کرنے اور میڈیکل سپرنٹنڈنٹس کو مالی اختیارات دینے کے لئے مالی ضوابط میں ضروری ترمیم کرنے کی ہدایت کی ہے، اس ترمیم کا مقصد ہسپتالوں کو درپیش اہم نوعیت کے مسائل کا فوری حل ہے جبکہ وزیراعلیٰ نے ادویات اور طبی آلات کی خریداری اور ہسپتالوں کی تعمیر ومرمت کے جاری منصوبوں کے لئے درکار فنڈز کے اجراء میں درپیش رکاوٹوں کو دور کرنے کے لئے محکمہ صحت اور محکمہ خزانہ کے حکام کو اجلاس منعقد کرکے محکمہ صحت کو درکار فنڈزکے اجراء کا طریقہ کار کرنے کی ہدایت کی ہے، وزیراعلیٰ فاطمہ جناح چیسٹ اینڈ جنرل ہسپتال کے امور کے جائزہ اجلاس کی صدارت کررہے تھے، صوبائی وزیر صحت میرنصیب اللہ مری،سیکریٹری صحت اور ایڈیشنل سیکرٹری خزانہ نے بھی اجلاس میں شرکت کی جبکہ ہسپتال کے ایم ایس ڈاکٹر شیر احمد ساتکزئی نے بریفنگ دی۔ وزیراعلیٰ نے کہاکہ اختیارات کی مرکزیت سے نظام تنزلی کا شکار ہورہا ہے اور ادارے اپنا کام صحیح معنوں میں انجام نہیں دے پارہے، اس مسئلے کا واحد حل اختیارات کی منتقلی اور اداروں کی خودمختاری ہے، ہسپتالوں کے مالی وانتظامی اختیارات میں اضافے سے ان کے وسائل کو بڑھایا ور انہیں فوری نوعیت کے مسائل کے حل کے لئے بروئے کار لایا جاسکتا ہے،اس موقع پر ہسپتالوں کے لئے ادویات اور آلات کی خریداری سے متعلق امور کا بھی جائزہ لیا گیا اور اس امر سے اتفاق کیا گیا کہ ہسپتالوں کی ضروریات کے مطابق ڈویژنل سطح پر ادویات کی خریداری کے ذریعہ شفافیت اور وقت کی بچت کو یقینی بنایا جاسکتا ہے، اجلاس میں فاطمہ جناح ہسپتال میں قائم کی گئی جدید ریفرینس لیبارٹری کی فوری فعالی کے لئے درکار فنڈز کے اجراء کی منظوری بھی دی گئی، ایم ایس ہسپتال نے بتایا کہ جلد ہسپتال میں چیسٹ سرجری کا آغاز کیا جارہا ہے اور علاج معالجہ کی سہولتوں میں بھی اضافہ کیا گیا ہے۔
()()()
خبر نامہ نمبر 710/2019 
اسلام آباد26فروری۔ صوبائی وزیر داخلہ و پی ڈی ایم اے میر ضیاء اللہ لانگو نے وفاقی دارالحکومت اسلام آباد میں چیئرمین نیشنل ڈیزاسٹر مینجمنٹ اتھارٹی عمر محمود حیات سے ملاقات کی، انہوں نے چیئرمین این ڈی ایم اے کو بلوچستان میں بارشوں اور سیلاب کی تباہ کاریوں اور اس کے بعد پیدا ہونے والی صورتحال سے آگاہ کرتے ہوئے متاثرین کی امداد اور بحالی کے لئے صوبائی ڈیزاسٹر مینجمنٹ اتھارٹی کے کردار سرگرمیوں کے حوالے سے بھی تبادلہ خیال کیا۔صوبائی وزیر نے کہا کہ پی ڈی ایم اے ریلیف اینڈ ریسکیو( Relief and Rescue ) آپریشن میں شب و روز مصروف عمل ہے اور متاثرین کی بحالی کیلئے پی ڈی ایم اے اور صوبائی حکومت اپنے تمام دستیاب وسائل بروئے کار لا رہے ہیں۔صوبائی وزیر نے چیئرمین این ڈی ایم اے سے بات چیت کرتے ہوئے کہا کہ حالیہ بارشوں اور سیلاب کی تباہ کاریوں کی وجہ سے متاثرہ اضلاع میں رابطہ سڑکیں، آبنوشی سکیمات اور حفاظتی بندات کی ازسرنو تعمیر اور بحالی کے لئے پی ڈی ایم اے، ضلعی انتظامیہ، پاک فوج اور دیگر ادارے بھرپور کوشش کر رہے ہیں۔اس موقع پر چیئرمین این ڈی ایم اے عمر محمود حیات نے کہا کہ وہ بارش کی تباہ کاریوں سے بلوچستان کے متاثرہ اضلاع میں لوگوں کی امداد اور بحالی کے لیے ہر ممکن تعاون کریں گے۔انہوں نے صوبائی وزیر کو مختلف اضلاع میں بارش اور سیلاب متاثرین کی امداد کے لئے 10ہزار تھیلے اشیائے خور و نوش مہیا کرنے کی بھی یقین دہانی بھی کرائی ۔دریں اثنا صوبائی وزیر نے کہا کہ صوبائی ڈیزاسٹر مینجمنٹ اتھارٹی کا مقصد ہی مصیبت، آزمائش اور مشکل کی گھڑی میں اپنے ہموطنوں کی مدد کرنا اور مشکل سے نکالنا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ وہ بارشوں اور سیلاب سے متاثرہ اضلاع اور افراد کی مکمل بحالی تک چین سے نہیں بیٹھیں گے۔ وہ ریلیف اور ریسکیو(Relief and Rescue ) آپریشن کی نگرانی کرتے ہوئے ڈویژنل کمشنرز، ضلعی انتظامیہ اور امدادی سرگرمیوں میں مامور پی ٹی ایم اے حکام سے مکمل رابطے میں ہیں اور انہیں متاثرہ اضلاع میں جاری امدادی سرگرمیوں کے مجموعی صورتحال سے لمحہ بہ لمحہ آگاہ کیا جا رہا ہے۔
()()()
خبر نامہ نمبر 711/2019 
بارکھان26فروری۔ صوبائی وزیر خوراک وبہبودآبادی سردار عبدالرحمن کھیتران نے ڈ پٹی کمشنر سہیل انور ہاشمی کے ہمراہ او جی ڈی سی ایل کے افسران سے بات چیت کرتے ہوئے نے کہا کہ آپ ہمارے مہمان ہیں آپ محنت اور لگن سے اپنا سروے جاری رکھیں حکومت ہر حوالے سے آپ کا خیال رکھے گی سروے کرنے میں لوکل لوگوں کو اپنے ہمراہ رکھیں اور وہ آپ کی صحیح راہنمائی کر سکتے ہیں۔صوبائی وزیر نے کہا کہ ہمیں پاکستانی ہونے پرفخرہے سبزہلالی پرچم کے سائے تلے ہم ایک ہیں ہمارے لوگ غربت کی لکیرسے نیچے زندگی بسر کرتے ہیں ضلع بارکھان میں روز گار کے مواقع کم ہیں کوئی صنعتی زون نہیں ہے آپ مقامی لوگوں کواپنے ساتھ آن بورڈ رکھیں اوراَنہیں اچھا اعزایہ دیں لوکل لوگوں کواپنے ساتھ رکھنے سے آپ کوسروے میں آسانی ہوگی اوراپنے مقاصد میں کا میاب ہوسکتے ہیں انہوں نے کہا کہ ،او جی ڈی سی ایل کمپنی بچوں کو پڑھانے اورا سکالرشپ فراہم کریں تاکہ غریب بچے پڑھ کر معاشرے میں اپنا کردار اداکر یں ،اوجی سی ایل کی عمارت کیلئے ضروری سامان بھی مہیا کیا جائے تاکہ یہاں کے لوگوں کو ریلیف مل سکے صوبائی وزیر نے ڈی ایچ او بارکھان سے ہسپتال کیلئے آپریشن تھیٹر سولر سسٹم اور ضروری سامان مہیا کرنے کابھی وعدہ کیا اور انہوں ڈی ایچ او سے کہا کہ ملازمین کو ڈیوٹی کا پابند بنایا جائے سٹاف کی کمی بارے میں صوبائی وزیر نے کہا کہ حکومت خالی آسامیوں کو پر کرنے کا اعلان کیا ہے جلد خالی آسامیوں کو متہشر کر کے اہل افراد کو بھرتی کیا جائے گا جس سے سٹاف کی کمی پوری ہوجا ئے تعلیم کے حوالے سے صوبائی وزیر نے کہا کہ صوبائی حکومت نے تعلیمی ایمرجنسی نافذ کی ہوئی ہے غیر فعال سکولوں کوفعال کیا جارہا ہے اوراساتذہ کوڈیوٹی کا پابند کیا گیا ہے اور جوبھی غیرحاضر پکڑا گیا اسکے خلاف کا رروائی کی جائے گی صحت وتعلیم پر رعایت دینے کی کوئی گنجائش نہیں جو بھی کوتا ہی کرے گا اس کا صلہ پائے گا صوبائی وزیر نے تراب شاہ کا دورہ کیا اور کھیتران ہاؤس میں قبائلی تنازعات کے چند فیصلے کئے جن میں باڈیانی ،ڈاریانی قوم کازمین کے تنازعہ کا فیصلہ ہوا تنازعہ کا فیصلہ ہونے پر دونوں فریقین نے صوبائی وزیر شکریہ ادا کیا ،اورآپس میں شیر وشکر ہوگئے اور لوگوں نے قبائلی رسم ورواج سے قبائلی تنازعات کے حل کو فوری اور سستی عدالت قرار دیا ۔
()()()
خبر نامہ نمبر 712/2019 
کراچی 26فروری :۔صوبائی وزیر پی ایچ ای حاجی نورمحمددمڑ نے گزشتہ روزمنیجنگ ڈائر یکٹرسوئی سدرن گیس سے کراچی میں ملاقات کی۔ انہوں نے اپنے حلقے میں گیس کی ترسیل سے متعلق مشکلات سے ایم ڈی کو آگاہ کیا ۔سنجاوی میں ایل پی جی پلانٹ پر فوری طور پر کام شروع کرنے پرزور دیا تاکہ سنجاوی کے عوام کا یہ دیرینہ مسئلہ ترجیحی بنیادوں پر حال ہوسکے ۔صوبائی وزیر نے زیارت کے گرد ونواح کو گیس کنکشن کے متعلق منظوری عمل میں لانے پر بھی زور دیا ۔اس موقع پر ایم ڈی سوئی سدرن گیس نے فوری طور پراحکامات جاری کیے تاکہ زیارت وگردنواح کو گیس کی فراہمی کو یقینی بنایا جا سکے جس میں قیمتی جنگلا ت کوکاٹنے سے بچایا جاسکے ایم ڈی گیس نے صوبائی وزیر کو گیس کی فراہمی سے متعلق ہر طرح کی تعاون کی یقین دہانی کرائی ۔
()()()
خبر نامہ نمبر 713/2019 
کوئٹہ26 فروری:۔انسپکٹر جنرل آف پولیس بلوچستان محسن حسن بٹ نے کچہری کے سامنے فائرنگ کرنے والے ملزم اسد کے فرار ہونے کی کوشش کو ناکام بناتے ہوئے بروقت اسلحہ سمیت گرفتار کرنے پر ٹریفک پولیس کے اہلکاروں سکندر اور عمیر کو جرات اور جوانمردی کا مظاہرہ کرنے پر انہیں نقد انعام اور تعریفی سند دینے کا اعلان کردیا ہے ۔ 
()()()
خبر نامہ نمبر 714/2019 
کوئٹہ26 فروری:۔ سیکرٹری آر ٹی اے کوئٹہ ڈویژن روحانہ گل کاکڑکی خصوصی ہدایت پر آر ٹی اے، ٹریفک پولیس اور لیویز کے ہمراہ جبل نور کوئٹہ پر غیر قانونی گاڑیوں پر لگی سرچ لائٹس، فٹنس سرٹیفکیٹ ڈرائیونگ لائسنس، کاغذات اور روٹ پرمٹ نہ رکھنے والی پبلک مال بردار گاڑیوں کے خلاف کارروائی کرتے ہوئے تین رکشے ،ایک ٹریکٹر اور ایک گاڑی کو بند کردیا گیا جبکہ 56 گاڑیوں کو ڈرائیونگ لائسنس، فٹنس سرٹیفکیٹ، اوورلوڈنگ پر چالان کیے گئے سیکرٹری آر ٹی اے نے کہا کہ کوئٹہ شہر اور قومی شاہراہوں پر گاڑیوں میں لگی اضافی سرچ لائٹس، اوورلوڈنگ کرنے والوں کے خلاف کارروائی جاری رہے گی۔
()()()
خبر نامہ نمبر 715/2019 
کوئٹہ 26 فروری۔ کمشنر کوئٹہ ڈویژن عثمان علی خان نے کہا ہے کہ کوئٹہ ڈویلپمنٹ پیکج صوبائی حکومت کی جانب سے ٹریفک کے نظام کی بہتری اور عوام کی سہولت کے لئے ایک عظیم الشان منصوبہ ہے اس منصوبے کی بروقت تکمیل سے کوئٹہ کے شہریوں کو ٹریفک سے متعلق درپیش مشکلات سے نجات ملنے کے ساتھ ساتھ دیگرمسائل ترجیح بنیادوں پر حل ہوں گے۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے کوئٹہ ڈویلپمنٹ پیکج کے حوالے سے منعقدہ اجلاس کے دوران کیااجلاس میں ڈپٹی کمشنر کوئٹہ کیپٹن(ر)طاہر ظفر عباسی،ڈپٹی پروجیکٹ ڈائریکٹرعابدمحمود ،سوئی سدرن گیس کمپنی سے وسیم ناگی،عبدالواحد،کیسکو سے سید سجادحسن،این ٹی سی سے محمد جاوید رانا،کنٹونمنٹ بورڈ کوئٹہ سے نعمت ملک ،محکمہ ریلوے سے مدثر شاہ کے علاوہ مختلف ڈیپارٹمنٹ کے دیگر افسران بھی موجود تھے، کمشنر کوئٹہ ڈویژن نے کہا کہ حکومت عوام کو ٹریفک کے حوالے سے سہولیات فراہم کرنے کے لئے کوئٹہ کی اہم شاہراہوں کو کشادہ اور توسیع کا منصوبہ جلد از جلد پایہ تکمیل تک پہنچایا جائے گا ۔کوئٹہ پیکیج میں آنے والے غیر قانونی اراضی کو واگزار کیا جائے گا اور کوئٹہ پیکیج کے تحت متعلقہ محکموں کوبھی ہدایت جاری کر دی گئی ہے کہ وہ اپنی تنصیبات پانی وگیس پائپ لائنوں،پی ٹی سی ایل اور بجلی کے کھمبوں کو جلد از جلد منتقل کر دیں، انہوں نے کہا کہ کوئٹہ پیکج میں دو پل کی تعمیرات بروری روڈ تازرغون روڈ اور چمن پھاٹک تا پشین ا سٹاپ شامل ہیں ان پلوں کی تعمیر سے عوام کو آمدورفت میں سہولت کے ساتھ ساتھ رش میں بھی کمی واقع ہوگی ۔انہوں نے کہا کہ کوئٹہ پیکج میں سریاب روڈ ،جوائنٹ روڈا ور سبزل روڈ کی توسیع کے منصوبے بھی شامل ہیں ان شاہراہوں کی تعمیرو توسیع سے شہر میں ٹریفک جام کا مسئلہ حل ہونے کے علاوہ ٹریفک کی روانی میں بھی بہتری آئے گی۔آخر میں انہوں نے کہا کہ کوئٹہ ڈویلپمنٹ پیکج میں حائل رکاوٹوں کو جلد از جلد دورکرنے کے ساتھ ان منصوبوں کی بروقت تکمیل کیلئے تمام تر وسائل کو بروئے کار لایا جائے گا۔
()()()
خبر نامہ نمبر 716/2019 
نصیرآباد26فروری۔کمشنر نصیر آباد ڈویژن جاوید اختر محمود نے ڈسٹرکٹ ہیڈ کوارٹر ہسپتال ڈیرہ مرادجمالی کا دورہ کیا ڈینٹل ، چلڈرن وارڈز،اور ٹراما ایمرجنسی سینٹر سمیت مختلف شعبوں کامعائنہ کیا اس موقع پر میڈیکل سپرنٹنڈنٹ ڈاکٹر ایاز حسین جمالی نے کمشنر کو سول ہسپتال کے درپیش مسائل کے متعلق آگاہی فراہم کی کمشنر نصیر آباد جاوید اختر محمود نے سول ہسپتال کی صفائی ستھرائی پر اطمینان کا اظہارکیااور کہا کہ سول ہسپتال کے مسائل کے متعلق صوبائی حکومت سے رابطے میں ہیں اور مسائل کے تدارک کے لئے تمام وسائل بروئے کار لارہے ہیں ہماری بھرپورکوشش ہے کہ عوام کو صحت کی سہولیات فراہم کی جائیں سرجری ،ڈائیلسز مشین سمیت دیگر شعبوں میں بہتری لانے کے لئے ہنگامی بنیادوں پر کام کا آغاز کیا جائے تاکہ عوام زیادہ سے زیادہ مستفید ہو سکے وزیراعلی جام کمال خان صحت اور تعلیم کے شعبوں میں بہتری لانے کے لئے کوشاں ہیں صحت کے شعبے میں مزید بہتری لانے کے لئے ڈاکٹرز اور پیرا میڈیکل اسٹاف اپناکلیدی کردار ادا کریں تاکہ حکومت کی جانب سے فراہم کی جانے والی مفت طبی سہولیات عوام تک بہتر انداز میں فراہم کی جاسکیں انہوں نے کہا کہ ڈاکٹر اور پیرامیڈیکل اسٹاف اپنی حاضری کو یقینی بنائیں تاکہ دور دراز علاقوں سے آنے والے مریضوں کوطبی سہولیات فراہم ہو سکیں اس سلسلے میں کسی قسم کی کوتاہی یالاپرواہی ہرگز برداشت نہیں کی جائے گی ڈویژن ہیڈکوآرٹرہسپتال ہونے کے باعث یہاں پرمریضوں کا رش زیادہ ہوتی ہے اسی لئے ڈاکٹرز کا فرض بنتا ہے کہ وہ اپنے فرائض نیک نیتی سے سرانجام دے کر عوام کی خدمت کریں۔
()()()
خبر نامہ نمبر 717/2019 
نصیر آباد 26فروری۔ڈپٹی کمشنر صحبت پور محمد یونس سنجرانی نے کہا کہ تعلیم کے ساتھ ساتھ کھیلوں کی سرگرمیاں صحت مندانہ زندگی کو فروغ دیتی ہے بچوں میں کھیلوں کی سرگرمیاں پیدا کرنا اور انہیں صحت مند زندگی فراہم کرنا ہم سب کی اولین ذمہ داریوں میں شامل ہے کیونکہ یہی بچے آگے چل کر صوبے اور ملک کا نام روشن کریں گے ہم سب پر لازم ہے کہ ہم طالب علموں کو بہترین تعلیم سے آراستہ کریں اور انہیں تعلیمی وقت سے فراغت کے بعد انہیں کھیلوں کی طرف بھی راغب کریں طلباوطالبات کھیلوں کی سرگرمیوں میں بڑھ چڑھ کر حصہ لیں کیونکہ صحت مند انسان ہی دنیا کے تمام چیلنجز سے بہتر انداز میں نمٹ سکتا ہے ان خیالات کا اظہار انہوں نے ضلع صحبت پور کے وزیر خان مڈل اسکول میں اسپورٹس ویک کی منعقدہ تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کیا اس موقع پر اسکول کے بچوں نے رساکشی سمیت دیگرکھیلوں کے مقابلوں میں حصہ لیا ڈپٹی کمشنر محمد یونس سنجرانی نے کامیابی حاصل کرنے والے بچوں میں انعامات بھی تقسیم کیے اس موقع پر اسسٹنٹ کمشنر صحبت پورامجد علی سومرو سمیت اساتذہ کرام اور بچے کثیر تعداد میں موجود تھے ڈپٹی کمشنر محمد یونس سنجرانی نے کہا کہ صوبائی حکومت تعلیم کے فروغ کے لئے بھرپور کوشش کر رہی ہے اسکولوں میں داخلہ مہم کا بھی بہت جلد آغاز کر دیا جائے گا تاکہ وہ بچے جو اسکولوں میں ابھی تک داخل نہیں ہو سکے ہیں انہیں اسکول میں داخلہ دلاکر ایک پڑھا لکھا شہری بنایا جا سکے اور مستقبل میں وہ علاقے کی خدمت کرسکے ہماری بھرپورکوشش ہے کہ صوبے سے جہالت کا خاتمہ کیا جا سکے اور ملک کے مستقبل کو روشن کیا جائے اور یہ سب اس وقت ممکن ہوگا جب تک ہم تعلیم پر عبور حاصل نہیں کر لیتے علم کے ذریعہ ہیں کامیابیوں کا سفر تہہ کیا جا سکتا ہے جہالت کسی بھی قوم کامقدرنہیں بدل سکتی ہم سب کومل کر محنت کرنی ہوگی اور بچوں کو تعلیم کے زیور سے آراستہ کرنا ہوگا اسی میں ہم سب کی کامیابی ہے پڑھا لکھا بلوچستان صوبائی حکومت کی اولین ترجیح ہے جس کے لئے ہم سب کو صوبائی حکومت کا ساتھ دینا ہوگا اور اپنے بچوں کو اسکولوں میں داخل کروانا ہوگا۔
()()()
خبر نامہ نمبر 718/2019 
نصیر آباد 26فروری۔ڈپٹی کمشنر نصیرآباد کے آفس سے جاری کردہ پریس ریلیز کے مطابق ضلعی انتظامیہ اور محکمہ تعلیم نصیرآباد کی جانب سے داخلہ مہم 2019 کا اعلان کردیا گیا ہے ۔ یکم مارچ سے ضلع نصیر آباد کے تمام گورنمنٹ اسکول میں کچی جماعت کے داخلہ شروع کیے گئے ہیں داخلہ لینے والے بچوں کو حکومت بلوچستان محکمہ تعلیم کی جانب سے مفت درسی کتب اور لکھنے پڑھنے کا سامان فراہم کیا جا رہا ہے شعور آگاہی کے سلسلے میں ضلع بھر کے تمام ہائی سکولز میں کلسٹر کی سطح پر واک اور لاؤڈ اسپیکر کے ذریعے اعلانات کیے جائیں گے تاکہ زیادہ سے زیادہ بچوں کو سکول میں داخل کیا جا سکے ایجوکیشن سپورٹ پروجیکٹ یونیسیف اور محکمہ تعلیم کی جانب سے کلسٹر اور گاؤں کی سطح پر مختلف پروگرام ترتیب دیے گئے ہیں تاکہ لوگوں کو تعلیم کی اہمیت کے بارے میں آگاہی فراہم کی جا سکے کمیونٹی میٹنگ لاؤڈ اسپیکر کے اعلانات اور دیگر تقریبات کے ذریعے عوام کو شعور آگاہی دی جائے گی تاکہ ضلع بھر کے تمام سرکاری اسکول میں سوفیصد داخل ہوسکیں اور ضلع نصیرآباد کا ہر بچہ جس کی عمر پانچ سال ہو اسکول میں داخل ہو جائے تاکہ پڑھا لکھا معاشرہ تشکیل پاسکے علاوہ ازیں روزانہ کی سطح پر داخل شدہ بچوں کی تعداد بذریعہ ایس ایم ایس یا واٹس ایپ کے ڈائریکٹوریٹ آف ایجوکیشن کو فراہم کی جائے گی جس کے لیے تمام کلسٹر ہیڈز اور ہیڈ ٹیچرز کو ہدایات ضلعی تعلیمی دفتر سے مراسلے کے ذریعے جاری کیا جائے گا ضلعی انتظامیہ اور محکمہ تعلیم نصیرآباد اور ایجوکیشن سپورٹ پرو جیکٹ یونیسیف کی جانب سے اہل علاقہ سماجی کارکن، میڈیا ،سماجی رہنما ء،بلدیاتی نمائندوں تاجر برادری سے گزارش ہے کہ وہ داخلہ مہم 2019 کو کامیاب بنانے کے لیے ہمارا ساتھ دیں اس سال محکمہ تعلیم کی جانب سے ضلع نصیرآباد کو چودہ ہزار چار سو نواسی میں بچوں کو سکولوں میں داخل کرانے کا ہدف مقرر گیا ہے جس کے لیے تمام طبقات سے گزارش ہے کہ شعور آگاہی مہم کو کامیاب بنائیں تاکہ پانچ سال کے ہر بچے بچی کو اسکول میں داخل کرایا جاسکے۔
()()()
خبر نامہ نمبر 719/2019 
لورالائی26فروری ۔ صوبائی پارلیمانی سیکرٹری جنگلات جنگلی حیات وئلڈ لائف سردار مسعود لونی نے کہاہے کہ بھارت کی دھمکیوں سے پاکستان کو کسی صورت خوف زدہ نہیں کیا جاسکتا پاکستان ایک ایٹمی ملک ہے اگر بھارت نے تھوڑی سی بھی غلطی کی تو شکست بھارت کا مقدر بنے گا انہوں نے کہا کہ وزیر اعظم عمران خان کا قوم سے خطاب میں دو ٹوک موئف اختیار کرنا بیس کروڑ عوام کی ترجمانی ہے انہوں نے کہا کہ بھارت پلوامہ حملے کو جواز بناکر پاکستان پر حملے کی ناکام کوشش کر رہا ہے اور الیکشن میں پاکستان مخالف مہم کو گرم کر کے اپنی کامیابی کیلئے راہ تلاش کر رہے ہیں انہوں نے کہا کہ پوری قوم افواج پاکستان کے ساتھ کھڑی ہے انہوں نے کہا کہ صوبائی حکومت خانوزئی کے چھ بچوں اور ایک خاتون کے جان بحق ہونے پر انکے خاندان کے دکھ درد میں برابر کی شریک ہے وزیر اعلیٰ جام کمال خان نے سندھ کے وزیر اعلیٰ سے بات کی ہے اور واقعہ پر پورے صوبے کے عوام اور حکومت بلوچستان کے رد عمل سے انھیںآگاہ کر دیا گیا ہے سندھ کی حکومت اس دلخرا ش واقعہ کی انکوائری کر رہی ہے رپورٹ آنے پر ملوث ہوٹل مالکان کے خلاف سخت ایکشن لیا جائیگا انہوں نے کہا کہ کسی کو معصوم زندگیوں سے کھیلنے کی اجازت نہیں دی جاسکتی انہوں نے کہا کہ وزیر اعلٰی نے کوئٹہ سمیت دیگر علاقوں میں بھی مضر صحت کھانوں پر سخت ایکشن لے لیا ہے اور ملوث ہوٹل مالکان کے ساتھ کوئی رعایت نہیں کی جائیگی انہوں نے کہا کہ صوبائی حکومت امن و امان برقرار رکھنے کیلئے سنجیدہ اقدامات اٹھا رہی ہے ہم امن دشمن قوتوں کے ساتھ کو ئی سمجھوتہ نہیں کرینگے انہوں نے کہا کہ صوبہ ترقی کی جانب گامزن ہے عوام کی ترقی و خو شحالی کیلئے حکومت کوشاں ہے روزگار کی فراہمی کیلئے اقدامات کر رہے ہیں انہوں نے کہا کہ ضلع دکی کو ایک مرتبہ پھر ترقی کی شاہراہ پر لیجانے کیلئے تمام تر وسائل کو بروئے کار لایا جائیگا اس حوالے سے افسران نیک نیتی اور ایمانداری کے ساتھ کام کریں تاکہ ترقی کے ثمرات جلد عوام تک پہنچ سکیں۔
()()()
خبر نامہ نمبر 720/2019 
ژوب 26فروری۔سپر لیگ کرکٹ چمپئین شپ کا شاندار افتتاح بڑی تعداد میں قبائلی و سیاسی رہنماؤں ضلعی افیسران نوجوانوں کرکٹ شائقین اور طلبا نے شرکت کی صوبائی مشیر مٹھا خان کاکڑ نے حاجی محمد خان کبزئی کی گیند پر شاٹ لگا کر چمپئین شپ کا افتتاح کیا اس موقع پر منعقدہ تقریب سے خطاب کرتے ہوئے صوبائی مشیر لائیو سٹاک حاجی مٹھا خان کاکڑ ، جے یو آئی (ف) کے مرکزی رہنما حاجی محمد خان کبزئی ، ڈپٹی ڈائریکٹر سماجی بہبود عبدالرحیم مردانزئی ، اکرام اللہ ، جہانگیر کبزئی ، پیر محمد ، صمد خان ،فضل امین ، نقیب اللہ مندوخیل ظفر اللہ کاکڑاور دیگر نے کہا کہ دنیا میں ترقی کرنے والی قوموں کے کھیل کے میدان آباد ہیں جہاں صحت مند معاشرہ فروغ پارہا ہے مگر بدقستی سے جن ممالک میں کھیلوں کے میدان آباد نہیں وہاں لوگ مختلف بیماریوں اور نوجوان نسل بے راہ روی کا شکار ہورہے ہیں انہوں نے کھیلوں کے میدان آباد کرنے اور نوجوانوں کو مثبت سرگرمیوں کے مواقعوں کی فراہمی پر زور دیتے ہوئے کہا کہ نوجوان ملک و قوم کا قیمتی سرمایہ ہوتا ہے ژوب کے نوجوانوں میں کسی قسم کی صلاحیتوں کی کمی نہیں تاہم نوجوانوں میں چھپی صلاحیتوں کو اجاگر کرنے کی ضرورت ہے جس کیلئے ژوب سپر لیگ کرکٹ چمپئین شپ جیسی سرگرمی ایک بہترین پلیٹ فارم ہے انہوں نے کہا کہ ژوب میں اپنی نوعیت کا پہلا چمپئین شپ منعقد ہو رہا ہے مقابلوں میں دیگر علاقوں کے کھلاڑی بھی حصہ لے رہے ہیں اس چمپئین شپ کے زریعے نوجوانوں کو اپنی صلاحیتوں کا لوہا منوانے کا بہترین موقع ملے گا جس پر منتظمین خراج تحسین کے مستحق ہے انہوں نے منتظمین کو مکمل تعاؤن کی یقین دہانی کراتے ہوئے کہا کہ اس طرح کی مثبت اقدامات کرنے والے افراد کو ہر فورم پر سپورٹ کرینگے 
()()()
خبر نامہ نمبر 721/2019 
سبی 26 فروری ۔تاریخی و ثقافتی میلہ سبی 2019 کی رونقیں رنگارنگ تقاریب تیسرے روز بھی جاری رہی ہے واضح رہے کہ حسب روایات امسال بھی تاریخی و ثقافتی میلہ سبی کا ایک دن خواتین اور بچوں کے لیے مخصوص تھا۔جس میں خواتین کی بڑی تعداد نے شرکت کی تیسرے روز بھی چاکر خان ڈومکی اسٹیڈیم میں خواتین تفریح کیلئے مختلف پروگرام ترتیب دیے گئے تھے جس سے حاضرین خوب لطف اندوز ہوئے خواتین ڈے کی اس تقریب کی مہمان خصوصی بیگم میجر جنرل خالد ضیاء تھی۔ اس موقع پر میجر جنرل خالد ضیاء ڈپٹی کمشنر زائد شاہ اور دیگر شعبہ ہائے زندگی سے تعلق رکھنے والے خواتین کی کثیر تعداد بھی شریک تھی تقریب کا باقاعدہ آغاز کرنے سے پہلے تلاوت کلام پاک اور نعت مبارکہ پیش کی گئی جس کے بعد بلوچستان کانسٹیبلری بلوچستان پولیس اور کیڈٹ کالج مستونگ کے چاک وچوبند گھوڑا سوار دستوں نے معزز مہمانوں کو سلامی پیش کی جبکہ اس موقع پر فلاورشو اور نیزہ بازی کا مظاہرہ بھی کیا گیا ملک بھر کے علاقائی رقص کا خوبصورت شواور گھوڑارقص کا بھی زبردست مظاہرہ کیا گیا جس سے حاضرین نے تالیوں کی گونج سے خوب سراہا اس کے علاوہ ملک کے مشہور ومعروف جانوروں کا نمائشی پریڈ کا انعقاد بھی کیا گیا تھا اور اس موقع پر 70 سالہ واجد آغانے موٹرسائیکل جمپ اور دس سالہ بچے نے ناک سے ٹیوب میں 10 پونڈ ہوا بھر کر حاضرین کو ورطہ حیرت میں ڈال دیا۔ جبکہ بلوچستان لیویز فورس کے جوانوں نے جوڈو کراٹے کے مظاہروں سے شائقین کو لطف اندوز کیا۔بعدازاں موٹر سائیکل جمپ اور ناک سے ٹیوب میں ہوا بھرنے والے بچے کے لئے میجر جنرل خالد صیاء اور ڈپٹی کمشنر سبی نے دس دس ہزار روپے160انعام دینے کا اعلان بھی کیا بعد ازاں160ڈی ای او فیمیل نصرت اقبال160نے بیگم میجر جنرل خالد160 ضیاء کو سوینئر بھی پیش کیا۔
()()()
خبر نامہ نمبر 722/2019 
سبی 26فروری۔ سابق نگران صوبائی وزیراطلاعات خرم شہزاد نے سبی کی سالانہ میلے کے موقع پر محکمہ اطلاعات کی جانب سے لگائے گئے سٹال کا معائنہ کرتے ہوئے کہا ہے کہ صوبے بھر میں محکمہ اطلاعات کی کارکردگی قابل تعریف اور اطمینان بخش ہے جبکہ اس موقع پر ایس ایس پی سبی عبدالحق عمرانی بھی انکے ہمراہ تھے۔
()()()
پریس ریلیز 
کوئٹہ 26فروری۔ یکم مارچ کو دنیا بھر میں شہری دفاع کا عالمی دن بڑے جوش و خروش سے منایا جارہا ہے اس دن کی مناسبت سے 28فروری 2019ء کو شہری دفاع کے صوبائی ہیڈ کوارٹر میں عملی مظاہرے کا انعقاد کیا جارہا ہے جس میں ریسکیو اینڈ سرچ آپریشن ، بالائی منزل سے زخمیوں کا اتارنے کے طریقے ، فرسٹ ایڈ ، بموں سے متعلق حفاظتی اقدامات اور آگ پر قابو پانے کے مختلف طریقوں کا عملی مظاہرہ کیا جائیگا جبکہ ایک سیمینار کا انعقاد بعنوان ’’بچوں کی حفاظت ہماری ذمہ داری ‘‘ شہری دفاع کے صوبائی ہیڈ کوارٹر میں کیا جائیگا جس میں مختلف مکاتب فکر کے لوگ اپنے مکالے پڑھیں گے اور شہری دفاع سے متعلق معلومات اور شہری دفاع کے معاشرے میں کردار پر روشنی ڈالی جائیگی شہری دفاع کا عالمی دن منانے کا مقصد شہری دفاع کی اہمیت اور افادیت کو اجاگر کرنا اور لوگوں میں شہری دفاع سے متعلق شعور و آگہی پیداکرنا ہے تاکہ زمانہ جنگ یا حالت امن میں کسی قسم کی بھی قدر تی یاغیر قدرتی آفت سے نمٹنے کیلئے ہر شہری اپنا کردار ادا کرسکے ۔ علاوہ ازیں یکم مارچ 2019ء بروز جمعہ صبح 10بجے پریس کلب سے عوام میں شعور و آگہی کے سلسلے میں ایک واک کا بھی اہتمام ہوگا ۔ صوبائی ہیڈ کوارٹر کے علاوہ تمام ڈویژنل ہیڈ کوارٹر ز میں بھی شہری دفاع کی مختلف تقاریب کا انعقاد کیا جائیگا ۔ 
()()()
پریس ریلیز 
کوئٹہ 26فروری۔ حاجی فتح محمد کرد بقضائے الہٰی انتقال کر گئے ۔ مرحوم عبدالوہاب کے بھائی محمد اکبر، عبدالستار ، شاہ محمد اور محمد آصف کے والد تھے مرحوم کو آبائی قبرستان میں سپرد خاک کردیا گیا ہے ۔ فاتحہ خوانی ماسٹر کالونی سرکی کلاں میں جاری ہے 
()()()

Share With:
Rate This Article
No Comments

Leave A Comment