خبرنامہ نمبر1206/2020
سبی 25مارچ :۔وزیراعلیٰ بلوچستان جام کمال خان نے سبی کے آئسولیشن وارڈ ز کا مختصراً دورہ کیا اس موقع پر ان کے ہمراہ صوبائی وزیرآبپاشی نوابزادہ طارق مگسی،کمشنر سبی ڈویڑن آغا فیصل شاہ اور ڈپٹی کمشنر ڈاکٹر یاسر بازئی تھے وزیراعلی ٰ بلوچستان جام کمال خان نے کہا کہ کرونا وائرس سے بچنے کے لیے شہری احتیاطی تدابیر پر عمل کرتے ہوئے گھروں میں رہنے کو ترجیح دیں ،مزید دس سے پندرہ دنوں تک بلوچستان میں لاک ڈا ون رہے گا ،دیہاڑی دار اور مزدور طبقے کو کسی صورت متاثر ہونے نہیں دیں گے بلوچستان کے شہری حکومت کے ساتھ تعاون کرکے قومی یگانگت و یکجہتی کا مظاہرہ کیا ہے کرونا جیسے موزی مرض کو آئسولیٹ رہ کرہی شکست دینا ہوگی ،وزیراعلیٰ بلوچستان جام کمال خان نے کہا ہے کہ کرونا سے نمٹنے کے لیے صوبائی حکومت بلوچستان نے محکمہ صحت ،کمشنریزسمیت تمام محکموں کو آن بورڈ لیا ہوا ہے ،کرونا وائرس کو پھیلنے سے روکنے کے لیے حکومت بلوچستان تمام سہولیات کی فراہمی کے لیے دستیاب وسائل کو برءوئے کار لا رہی ہے عوام سماجی روابط کو محدود کرکے کرونا جیسی مہلک وباءسے بچا جاسکتا ہے ،ذخیرہ اندوزوں اور گراں فروشی کرنے والوں کے ساتھ سختی کے ساتھ نمٹا جائے گا جبکہ اس ضمن میں صوبائی حکومت فلور مل مالکان سے مل کر آٹے کی قیمتوں کو مستحکم رکھیں گے تاکہ عوام کو مشکلات کا سامنا نہ کرنا پڑئے ،وزیراعلیٰ بلوچستان جام کمال خان کا کہنا تھا کہ خود ساختہ مہنگائی کرنے والے تاجروں کے خلاف تمام ڈویژن کے کمشنروں کو سختی سے نمٹنے کی ہدایات جاری کردی ہیں اس کے علاوہ زائرین کو کوئٹہ اور تفتان تک محدود رکھ کر وباءکو پورئے صوبے میں پھیلنے سے روکنے کی مثبت کوشش کی گئی ہے وزیراعلیٰ بلوچستان جام کمال خان نے کہا کہ میں خود صوبے کے مختلف اضلاع کا دورہ کرکے قرنطینہ سینٹرز اور آئسولیشن وارڈ میں سہولیات کی کمی کا جائزہ لے رہا ہوں تاکہ سہولیات کی بہم ترسیل کو ممکن بنایا جاسکے اورسپلائی نظام متاثر ہونے کی وجہ سے پوری دنیا میں ضروریات اشیاءکی مانگ بڑھ گئی ہے ،صوبائی حکومت اشیاءخورد نوش کی کمی کو دستیاب وسائل میں ممکن بنانے کی کوشش کررہے ہیں ،بلوچستان میں وینٹی لینٹرز کی سہولیات بی ایم سی،شیخ زید اور فاطمہ جناح چیسٹ ہسپتال میں موجود ہے جبکہ دیہاڑی دار مزدور طبقہ اور غریب افراد کی بحالی کے لیے لیبر ڈیپارٹمنٹ ،سوشل ویلفیئر اور محکمہ صنعت و حرفت متعلقہ ڈپٹی کمشنرز کے ساتھ کوارڈی نیشن رکھ کر کوائف اکھٹے کررہے ہیں اس ضمن میں حکومت بلوچستان نے انڈومنٹ فنڈ قائم کرکے دیہاڑی دار طبقے کی بحالی کو ممکن بنایا جائے گا انہوں نے کہا کہ اللہ نہ کرئے صورتحال سنگین ہوگئی تو ملکی سطح پر بننے والی پالیسی پر عمل کرتے ہوئے اقدامات اٹھائے جائیں گے ،صوبائی حکومت بلوچستان موجودہ نازک حالت میں عوام کو بے یارومددگار نہیں چھوڑ سکتی ہے۔
﴾﴿﴾﴿﴾﴿
خبرنامہ نمبر1207/2020
خضدار 25مارچ :۔ڈ پٹی کمشنرز لاک ڈاون کے فیصلے پر ہر صورت عملدرآمد کرکے لوگوں کو گھروں تک محدود کردیں۔ذخیرہ اندوزی کی اطلاع پر فوری کارروائی کی جائیگی کمشنر قلات ڈویژن حافظ محمد طاہر کی تمام ڈپٹی کمشنرز کو سختی سے ہدایت۔کمشنر قلات ڈویژن نے کہا ہے کہ کرونا جیسے مہلک وبا کی وجہ سے ملک اس وقت مشکل صورتحال سے دوچار ہے۔عوام لاک ڈاون کے حکومتی فیصلے کو سنجیدگی سے لیکر اپنے اور اپنے پیاروں کی زندگیوں کو محفوظ بنائیں۔کمشنر قلات ڈویژن نے کہا کہ تمام اضلاع کے ڈپٹی کمشنرز کو ہدایات جاری کردی گئی ہے کہ لاک ڈاﺅن کے حکومتی فیصلے پر ہر صورت عملدرآمد کرایا جائیںاور اس حولے سے فوری و ضروری اقدامات کیے جائیں۔انہوں نے کہا کہ ذخیرہ اندوزی کی کسی صورت گنجائش نہیں اگر کسی نے ناجائزمنافع خوری یا ذخیرہ اندوزی کرنے کی کوشش کی تو فوری طور پر سرکاری مشینری حرکت میں ا¿جائیگی اور ایسے عناصر کے خلاف نہ صرف سخت کاروائی کی جائیگی بلکہ قبضہ میں لیا گیا سامان غریب خاندانوں میں مفت تقسیم کیا جائیگا۔انہوں نے کہا کہ کرونا کی وبا پر قابو پانے کے لئے ضروری ہے کہ شہری گھروں تک محدود رہیں۔اس دوران درپیش عوامی مشکلات کا اندازہ ہے لیکن کرونا سے بچاو کے لئے حکومتی اقدامات شہریوں کی زندگیاں محفوظ بنانے کے لئے ہیں عوام کو اب سنجیدگی کا مظاہرہ کرتے ہو ئے مہلک وبا کے خلاف جنگ میں حکومتی اداروں کا ساتھ دینا چاہیںکمشنر قلات ڈویژن نے کہا کہ کرونا جیسے مہلک وبا سے بچنے کا واحد طریقہ یا حل احتیاطی تدابیر اختیار کرناہیں۔ شہری اس دوران اپنے گھروں کو عبادت گاہ اور اپنی تنہائی کو تلاوت قرا¿ن پاک کا ذریعہ بنا ئیں اس میں مکمل شفاءہیں انہوں نے کہا کہ پاکستان سمیت پوری دنیا اس وقت مشکل صورتحال سے دوچار ہے ہمیں ایک زندہ قوم کی حیثیت سے حالات کا مقابلہ کرنا ہے۔ماہرین صحت کی ہدایات پر عمل کرکے ہی ہم اس جنگ میں سرخرو ہوسکتے ہیں۔ انہوں نے علماءکرام قبائلی عمائدین سیاسی ورکروں و میڈیاکے کردار کو انتہای اہم قرار دیتے ہوئے کہا کہ مذ ہبی طبقہ عوام میں شعور بیدار کرنے کے لئے بنیادی کردار ادا کرسکتا ہے۔علماءکرام کی ذمہ دادی بنتی ہے کہ وہ اس مشکل صورتحال میں لوگوں کی صحیح معنوں میں رہنمائی کریں اور لوگوں کو باورکرائیں کہ ایک دوسرے سے مصافحہ کرناگلے ملنا کرونا جیسے مہلک وجان لیوا وبا کو قوت وتوانائی فراہم کرنے کے مترادف ہے۔کمشنر قلات ڈویژن حافظ محمد طاہر نے کہا کہ لاک ڈاون کے باعث مزدور و دھاڑی دار طبقے کے متاثر ہونے کا خدشہ ہے اس حوالے سے صوبائی حکومت پالیسی ترتیب دے رہی ہے تاہم سیاسی رہنماﺅں صاحب اختیار لوگوں کافرض بنتا ہے کہ معاشی طور پر کمزور و نادار لوگوں کی مدد کریں۔مشکل وقت میں غریب افراد کی مدد کرکے ہی ہم اللہ تعالی کی خوشنودی حاصل کرسکتے ہیں۔
﴾﴿﴾﴿﴾﴿
خبرنامہ نمبر1208/2020
پشےن 25مارچ :۔ کورونا وائرس کے پھلا¶ کے خطر ے کے پیش نظر ڈپٹی کمشنر پشےن قائم لاشاری کی خصوصی ہدایت پر ایڈیشنل ڈپٹی کمشنر جنرل امین اللہ ناصر نے منگل کے روز ڈسٹرکٹ ہیڈ کوارٹر ہسپتال پشےن کا دورہ کیا جہاں انہوں نے ایسولیشن وارڈ سمیت دیگر شعبوں کا تفصیلی معائنہ کرتے ہوئے میڈیکل سپرنٹنڈنٹ عبدالحنان آغا کو عالمی وباءکورونا وائرس کی روک تھام کیلئے ہسپتال میں غیر ضروری اور غیر متعلقہ افراد کے آنے پر پابندی جبکہ ایک مریض کے ساتھ ایک اٹینڈنٹ کو رہنے کی اجازت دینے حکم دیا انہوں نے ایم ایس اور ہسپتال عملہ سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ ہسپتال کے ملازمین ہاتھ ملانے اور بغل گیر ہونے اور کام کے دوران ایک جگہ پر جمع ہونے سے گریز کریں ۔
﴾﴿﴾﴿﴾﴿
خبرنامہ نمبر1209/2020
پشےن 25مارچ :۔ ڈپٹی کمشنر پشےن قائم لاشاری کی خصوصی ہدایت پر ایڈیشنل ڈپٹی کمشنر جنرل امین اللہ ناصر نے پشےن کے تحصیل حرمزئی کا دورہ کیا جہاں انہوں نے حرمزئی بازار میں کورونا وائرس سے متعلق جاری احکامات کی خلاف ورزی کرنےوالے غیر ضروری دکانیں بند کرواکر مختلف میڈیکل اسٹور ، چکن شاپش اور جنرل سٹورز مالکان کو سرکاری نرخنامہ آویزاں نہ کرنے ، غیر معیاری اور مضر صحت اشیاءفروخت کرنے پر جرمانہ بھی کیا۔
﴾﴿﴾﴿﴾﴿
پریس ریلیز
کوئٹہ 25مارچ :۔ڈی جی پی آر آفیسرز ویلفیئر ایسوسی ایشن کی جانب سے جاری کردہ ایک بیان میں کہا گیا ہے کہ صوبائی حکومت کرونا وائرس کی روک تھام اور حفاظتی اقدامات کررہی ہے۔محکمہ تعلقات عامہ دیگر ضروری محکموں کے ہمراہ موجودہ صورتحال میں عوام کو مستند خبریں،معلومات،آگاہی اور حکومت کی جانب سے اٹھائے گئے اقدامات الیکٹرونک،پرنٹ اور سوشل میڈیا پر تشہیری بھر پور انداز میں کررہا ہے۔محکمے کے ضلعی آفیسران صوبے بھر میں ضلعی انتظامیہ کی بھر پور کوریج کے ساتھ ساتھ لوگوں کو کرونا وائرس سے بچاو¿ کے احتیاطی تدابیر کے حوالے سے آگاہی فراہم کررہے ہیں۔روزانہ کی بنیاد پر صوبے میں کرونا وائرس کی صورتحال اور حکومتی اقدامات،معلومات،ہدایات اور آگاہی کے لیے ڈی جی پی آر کا دفتر مختلف شفٹوں میں 24گھنٹے فعال ہے۔حکومت کے اقدامات سے عوام کو آگاہ رکھنے کے ساتھ ساتھ لوگوں کو ضروری معلومات اور وائرس سے بچاو¿ کے لیے احتیاطی تدابیر سے آگاہ کررہے ہیں۔لہذ ا عوام حکومتی ہدایات پر مکمل عمل کریں کیونکہ حکومت کی جانب سے جاری کردہ احکامات اور ہدایات عوام کے تحفظ کے لیے بے حد ضروری ہے۔لہذا عوام سرکاری تعطیلات میں اپنے گھروں میں رہے اور غیر ضروری طور پر باہر نہ نکلیں اپنے ہاتھوں کو بار بار دھوئیں، باہر نکلنے پر ماسک کا استعمال ضرور کریں۔گھروں میں بچوں کو ٹیوشن پڑھائیں تاکہ انکی پڑھائی کا حرج نہ ہو۔غیر ضروری باہر جانے کی بجائے گھروں میں کتابیں پڑھیں،صوم و صلوة کی پابندی اور قرآن مجید کی تلاوت کریں اور اللہ سے دعا کریں کہ وہ ہمیں اس آزمائش سے نجات اور ہماری مشکلات ختم کرئے۔کرونا ایک عالمی وباءہے لہذا ضرورت اس امر کی ہے کہ اس وائرس سے نمٹانے کے لیے حکومت کے ساتھ ساتھ عوام کا تعاون بے حد اہم ہے کیونکہ وائرس تب تک آپ کے گھر نہیں لائے گا جب تک آپ خود وائرس کو باہر سے نہ لائے۔اس لیے عوام احتیاطی تدابیر پر عمل کریں کیونکہ احتیاط علاج سے بہتر ہے۔اس کے علاوہ ان دنوں مزدوروں اور اپنے آس پاس غریب اور نادار لوگوں پر نظر رکھیں اگر انہیں کسی چیز کی ضرورت ہے تو ان مدد کریں تاکہ وہ بھی اپنے خاندان کو پیٹ پال سکے۔صوبائی حکومت کرونا وائرس کی روک تھام کے لیے تمام ممکن وسائل بروئے کار لارہی ہے لہذا عوام حکومتی ہدایات پر چند روز عمل کرکے اس موذی مرض سے چھٹکارا حاصل کر سکتے ہیں۔
﴾﴿﴾﴿﴾﴿

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Post comment