خبرنامہ نمبر 607/2019
کوئٹہ21فروری:۔وزیراعلیٰ بلوچستان جام کمال خان کی جانب سے ڈائریکٹر جنرل صحت، ڈائریکٹر جنرل زراعت اور ڈائریکٹر جنرل لائیو اسٹاک کو 24گھنٹوں کے اندر خضدار میں اپنے کیمپ آفس قائم کرنے کی ہدایت کی گئی ہے، اس اقدام کا مقصد بارشوں اور سیلاب سے متاثرہ علاقوں میں صحت ، زراعت اور لائیواسٹاک کے شعبوں کو فوری طور پر بحال کرنا ہے، وزیراعلیٰ نے صحت اور لائیو اسٹاک کے محکموں کوآڑنجی، سارونہ اور دیگر متاثرہ علاقوں میں میڈیکل کیمپ اور مال مویشیوں کے عارضی ہسپتال قائم کرنے کی ہدایت بھی کی ہے تاکہ متاثرہ افراد کو علاج معالجہ کی تمام ضروری سہولیات فراہم کی جاسکیں اور مال مویشیوں کی حفاظتی ویکسین اور چارہ کی دستیابی کو بھی یقینی بنایا جاسکے۔ وزیراعلیٰ بلوچستان نے ڈپٹی کمشنر خضدار کو آرنجی اور سارونہ تحصیلوں کا دورہ کرکے رپورٹ پیش کرنے کی ہدایت بھی کی ہے۔ 
()()()
خبرنامہ نمبر 608/2019
کوئٹہ21فروری:۔صوبائی وزیر سماجی بہبود وچیئرمین بلوچستان عوامی انڈومنٹ فنڈ بورڈ میر اسد بلوچ نے کہا ہے کہ بلوچستان عوامی انڈومنٹ فنڈ بلوچستان کے غریب عوام کے لئے موجودہ عوامی حکومت کی جانب سے ایک تحفہ ہے جس سے صوبے کے ہر ضلع، تحصیل اوریونین کونسل کے عوام مستفید ہوں گے اور انہیں جان لیوا بیماری کی صورت میں حکومت کی جانب سے آغا خان ہسپتال کراچی سمیت کراچی اور اسلام آباد کے ہسپتالوں میں علاج معالجہ کی بہترین سہولتیں فراہم کی جائیں گی، وہ غریب لوگ جو علاج کی استطاعت نہیں رکھتے اب انہیں بھی بڑے ہسپتالوں میں علاج کی سہولت ملے گی۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے بلوچستان عوامی انڈومنٹ فنڈ بورڈ کے اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے کیا، سیکریٹری خزانہ نورالحق بلوچ اور بورڈ کے دیگر اراکین نے اجلاس میں شرکت کی، اجلاس کو انڈومنٹ فنڈ کے اجراء کے طریقہ کار سمیت اب تک ہونے والی پیشرفت کے بارے میں بریفنگ دی گئی اور اس ضمن میں اہم فیصلے بھی کئے گئے، صوبائی وزیر نے کہا کہ انڈومنٹ فنڈ محکمہ سماجی بہبود کے تحت قائم کیا گیا ہے اور اس پر صحیح معنوں میں عملدرآمد کو یقینی بنانا محکمے کی ذمہ داری ہے اس حوالے سے کسی قسم کی کوتاہی اور بدانتظامی برداشت نہیں کی جائے گی، محکمے کی ضلعی افسران فنڈ سے استفادہ کے لئے عوام کی مدد اور رہنمائی کریں، انہوں نے کہاکہ انڈومنٹ فنڈ سے صوبے کا ہر فرد خواہ اس کا تعلق کسی بھی سیاسی جماعت، قوم، قبیلے اور مذہب سے ہے فائدہ اٹھانے کا اہل ہے، محکمے کے افسران عوام کو ریلیف دینے کے اس پروگرام کی کامیابی کے لئے محنت،لگن اور خلوص نیت سے اپنی ذمہ داریاں سرانجام دیں جو کہ ان کی اخلاقی، سماجی اور مذہبی ذمہ داری بھی ہے، بورڈ کا آئندہ اجلاس 8مارچ کو منعقد ہوگا۔ 
()()()

خبرنامہ نمبر 609/2019
کوئٹہ21فروری:۔وزیراعلیٰ بلوچستان جام کمال خان نے پی ڈی ایم اے کو کسی بھی ہنگامی صورتحال اور قدرتی آفت سے موثر طور پر نمٹنے کے لئے ہمہ وقت تیار رہنے کی ہدایت کرتے ہوئے کہا ہے کہ حکومت متاثرین کی امدادوبحالی کے لئے کثیر فنڈز فراہم کررہی ہے لہٰذا پی ڈی ایم اے اور متاثرہ اضلاع کی انتظامیہ متاثرین کو معاونت کی فراہمی میں کوئی کسر اٹھانہ رکھیں۔ ان خیالات کا اظہارانہوں نے پی ڈی ایم کے دورے کے دوران حالیہ بارشوں اور برف باری سے ہونے والے نقصانات اور امدادی سرگرمیوں سے متعلق دی جانے والی بریفنگ کے دوران کیا۔ صوبائی وزیر داخلہ وپی ڈی ایم اے میر ضیاء لانگو بھی اس موقع پر موجود تھے۔ وزیراعلیٰ نے ہدایت کی کہ متاثرین کو مواصلاتی رابطہ کی سہولت کی فراہمی کے لئے پی ڈی ایم اے میں کال سینٹر قائم کیا جائے جس کے ذریعہ عوام معاونت کے حصول کے لئے پی ڈی ایم سے رابطہ کرسکیں، انہو ں نے ڈیزاسٹر رسک اسسٹمنٹ پلان تیار کرنے کی ہدایت بھی کی۔ انہوں نے کہا کہ پی ڈی ایم اے کی افادیت میں اضافہ کے لئے ادارے کے ایکٹ میں ضروری ترامیم کا جائزہ بھی لیا جائے گا۔ وزیراعلیٰ نے سول ڈیفنس اور پی ڈی ایم اے کے درمیان مربوط روابط کے قیام کی ضرورت پر بھی زور دیا تاکہ کسی بھی قدرتی آفت سے موثر طور پر نمٹنا ممکن ہوسکے۔ انہوں نے پی ڈی ایم اے کو برف باری سے متاثرہ علاقوں میں بھی رسائی حاصل کرنے اور امدادی سرگرمیاں شروع کرنے کی ہدایت کی۔ وزیراعلیٰ نے ہنگامی صورتحال کے دوران ادارے کے پاس موجود جدید آلات کے استعمال کی ہدایت بھی کی۔ 
()()()
خبرنامہ نمبر 610/2019
کوئٹہ21فروری:۔وزیراعلیٰ بلوچستان جام کمال خان کی ہدایت پر وزیراعلیٰ سیکریٹریٹ میں بارش اور برف باری سے پیدا ہونے والی صورتحال اور امدادی سرگرمیوں کی نگرانی کے لئے کنٹرول روم قائم کردیا گیا ہے، متاثرہ علاقوں کے عوام اپنے مسائل اور مشکلات سے کنٹرول روم کو بذریعہ ٹیلیفون آگاہ کرسکتے ہیں۔ کنٹرول روم کے قیام کا مقصد امداد وبحالی کی سرگرمیوں کو مربوط کرنا ہے، کنٹرول روم کے ٹیلیفون نمبر 081-9202061-9202069-9201798-9202424اور واٹس ایپ نمبر 03368005960 ہیں، کنٹرول روم براہ راست وزیراعلیٰ بلوچستان کو رپورٹ پیش کرے گا۔ 
()()()

خبرنامہ نمبر 611/2019
کوئٹہ21فروری:۔وزیراعلیٰ بلوچستان جام کمال خان نے حالیہ بارشوں اور سیلاب سے پیدا ہونے والی ہنگامی صورتحال سے موثر طور پرنمٹنے ، بروقت اقدامات کرنے اور سیلاب میں پھنسے لوگوں کو بحفاظت محفوظ مقامات تک پہنچانے پر کمشنر مکران ڈویژن، کمشنر قلات ڈویژن، ڈپٹی کمشنر لسبیلہ، ڈپٹی کمشنر خضدار، ڈپٹی کمشنر آواران اور ان کی ماتحت ٹیموں کی کارکردگی کو سراہا ہے، دریں اثناء وزیراعلیٰ کی ہدایت پر صوبائی حکومت کا ہیلی کاپٹر پاک فوج کی جانب سے فراہم کئے گئے ہیلی کاپٹروں کے ساتھ مشترکہ امدادی سرگرمیوں میں حصہ لے گا۔ 
()()()

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Post comment