خبرنامہ نمبر213/2019 
کوئٹہ 21 جنوری :۔ صوبائی وزیر خزانہ میر محمد عارف محمدحسنی نے صوبے کے مختلف علاقوں میں باران رحمت برسنے پر شکر ادا کرتے ہوئے اس رحمت خداوندی کو خشک سالی اور قحط زدہ علاقوں کیلئے نہایت مفید قرار دیا ہے انہوں نے کہاہے کہ گزشتہ کئی سالوں سے بارشیں نہ ہونے کی وجہ سے صوبے کی بعض علاقوں سے لوگ نقل مکانی کرنے پر مجبور ہوئے ہیں ۔لہذا اس سنگین صورتحال میں حکومتی مشینری بھر پور انداز میں عوام کو ریلیف پہنچانے میں مصروف عمل ہے ان نے اس حوالے سے کہا کہ قدرتی آفات کے اثرات کو کم کرنے میں انسان ایک حد تک کوششیں کرسکتا ہے لیکن قدرت کی عطا اور مہربانیوں کا دوسرا کوئی مول ہی نہیں۔صوبائی وزیر نے گذشتہ روز بارشیوں کے نتیجے میں سیلابی ریلے سے نوشکی کے قریب مل علاقہ میں سڑک بند ہونے کا فوری نوٹس لیتے ہوئے کمشنر رخشان ڈویڑن اور ڈی سی نوشکی کو سڑک کی بحالی کیلئے فوری اقدامات کرنے کی ہدایت کی جس پر انہوں نے بلڈوزر کی مدد سے سڑک پر ریت اور بڑے پتھروں کو ہٹا کر راستہ آمدورفت کے لیے کھول دیا۔
()()()
خبرنامہ نمبر214/2019 
کوئٹہ21جنوری۔ صوبائی وزیر آبپاشی نوابزادہ طارق مگسی نے کہا ہے کہ زراعت اور لائیو اسٹاک کے شعبے صوبے کی معیشت میں ریڑھ کی ہڈی کی حیثیت رکھتے ہیں ۔ حکومت صوبے کے بے روزگارویٹرنری ڈاکٹرز کو روزگار کی فراہمی کے لئے ٹھوس اقدمات کر رہی ہے ۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے بلوچستان بے روزگار ویٹر نری ڈاکٹر ز ایسو سی ایشن کے وفد سے گفتگوکرتے ہوئے کیا ۔ جس نے ایسو سی ایشن کے صدر ڈاکٹر ہمایوں کی قیادت میں ان سے یہاں ملاقات کی ۔ صوبائی وزیر نے کہا کہ صوبے کے بیشتر لوگوں کا انحصار لائیو اسٹاک پر ہے اس شعبے میں روزگار کے مواقع پیدا کرکے صوبہ کے بے روزگار پڑھے لکھے نواجونوں کو روزگار کی فراہمی کے لئے موجودہ حکومت پر عزم ہے ۔ ملاقات کے دوران وفد نے بے ر وزگار ویٹر نری ڈاکٹرز کو روزگار کے حصول میں درپیش مسائل سے آگاہ کرتے ہوئے صوبائی وزیر کو بتایا کہ بڑی تعداد میں ویٹر نری ڈاکٹرز بے روزگار ہیں حالیہ اعلان کردہ نئی اسامیوں میں انہیں بھرتی کیا جائے اور کوٹہ سسٹم ختم کرکے ویٹر نری ڈاکٹرز کی خالی اسامیاں اوپن میرٹ پر پر کی جائیں۔ صوبائی وزیر نے وفد کے مسائل توجہ اور غور سے سنے اور انہیں یقین دلایا کہ تمام نئی اسامیوں پر بھر تیوں میں شفافیت اور میرٹ کو مقدم رکھا جائے گا۔ دریں اثناء صوبائی وزیر آبپاشی نوابزادہ طارق مگسی سے صوبائی وزیر ٹرانسپورٹ میر عمر خان جمالی ، سیکریٹری آبپاشی سعید اعوان اور سیکریٹری مواصلات علی اکبر بلوچ نے بھی علیحدہ علیحدہ ملاقات کی ۔ اس موقع پر دونوں وزراء نے صوبے کی مجموعی صورتحال سمیت کھیر تھر کینال میں پانی کی موجود ہ صورتحال و دیگرامور پر تبادلہ خیا ل کیا۔ 
()()()
خبرنامہ نمبر215/2019 
کوئٹہ21جنوری۔ وزیر اعلیٰ بلوچستان جام کمال کی قیادت میں صوبہ ترقی کی جانب گامزن ہے حکومت کھیلوں کے انعقاد میں دلچسپی رکھتی ہے ماضی میں کھلا ڑیوں کے ساتھ ناانصافیاں ہوئی لیکن ہمارے دور میں کسی کے ساتھ ناانصافی نہیں ہوگی ہم نے فیصلہ کیا ہے کہ ٹیلنٹ کی حق تلفی نہیں ہوگی ۔ ان خیالات کا اظہار صوبائی مشیر کھیل وثقافت عبدالخالق ہزارہ نے ہزارہ ٹاؤن میں ووشو اکیڈمی کی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کیا ۔ انہوں نے کہا کہ سابقہ ادوار میں کرپشن کی انتہا تھی کھیلوں کے سامان انتہائی غیر معیاری تھے مگر ہمارے دور میں ایسا نہیں ہوگا ۔ سامان کے معیار پر کوئی سمجھوتہ نہیں کرینگے ۔ انہوں نے کہا کہ ہم نیشنل گیمز کے انعقاد کو ممکن بنائیں گے نیشنل گیمز کو منعقد کرکے پیغام دینگے کہ بلوچستان محفوظ ہے یہاں بلا خوف و خطر کھیلوں کے مقابلے ثقافتی پروگرام و اصلاحی پروگرام منعقد ہو رہے ہیں مثبت سر گرمیوں کے انعقاد سے صوبے میں امن محبت بھائی چار ے کی فضاء پروان چڑھے گی ۔ انہوں نے کہا کہ ملک اور صوبے کا نام روشن کرنے والے کھلاڑیوں کی حکومتی سطح پر بھر پور حوصلہ افزائی کی جائیگی تقریب کے آخر میں صوبائی مشیر نے ووشو اکیڈمی کے کھلاڑیوں میں انعامات بھی تقسیم کیئے ۔ 
()()()
خبرنامہ نمبر216/2019 
کوئٹہ 21 جنوری ۔صوبائی سیکریٹری ٹرانسپورٹ اور کمشنر کوئٹہ ڈویژن کی خصوصی ہدایت پر سیکرٹری آر ٹی اے کوئٹہ کی نگرانی میں آرٹی اے اور ٹریفک پولیس نے کم عمر ڈرائیورز، کاغذات اور پرمٹ نہ رکھنے والوں کے خلاف منان چوک پر کارروائی کرتے ہوئے بغیر پر مٹ اورکاغذات پر 5 رکشوں، 3 سوزوکی اورایک پک اپ گاڑی کو بند کردیا اس کے علاوہ ڈرائیونگ لائسنس نہ رکھنے اور کم عمر ڈرائیوروں کے خلاف بھی کاروائی عمل میں لاتے ہوئے 40 گاڑیوں کا چالان کیا گیا اس دوران متعدد گاڑیوں کے کالے شیشے بھی اتار دیے گئے کار وائی کے موقع پرحمیداللہ محمد حسنی ،ٹریفک پولیس کے علاوہ ایکسائز پولیس اور دیگر متعلقہ محکموں کا عملہ بھی موجود تھا سپریٹنڈنٹ آرٹی اے نے کہا کہ کوئٹہ شہر میں ٹریفک کی روانی کو بہتر بنانے اور غیر قانونی ،دو نمبر گاڑیوں اور رکشوں کے خلاف خصوصی مہم تیزی سے جاری ہے لہذا تمام گاڑی اور رکشہ مالکان اپنی گاڑیوں کے اصل کاغذات ہمراہ رکھیں تاکہ دوران چیکنگ متعلقہ عملے کو دیکھایا کیا جاسکے انہوں نے کہا کہ غیرقانونی اور دو نمبر رکشوں کی وجہ سے شہر میں ٹریفک کی روانی میں خلل پڑنے کے علاوہ لوگوں کے کاروباربھی متاثر ہو رہے ہیں لہذا ان کے خلاف بھی کارروائی عمل میں لائی جا رہی ہے انھوں نے عوام الناس سے اپیل کرتے ہوئے کہا کہ وہ اپنی گاڑیوں پر کالے شیشے لگانے سے گریز کریں قانون کی پاسداری کرتے ہوئے ٹریفک پولیس اور دیگر اداروں کے ساتھ بھرپور تعاون کریں انہوں نے کہا کہ کم عمر اور تجربہ نہ رکھنے والے ڈرائیوروں کے خلاف بھی سخت کارروائی عمل میں لائی جا رہی ہے۔
()()()
خبرنامہ نمبر217/2019 
زیارت21جنوری :۔عوام کے مسائل کے حل کے لیے مثبت کردار ادا کررہے ہیں اپنے حلقے کے تمام علاقوں میں یکساں طور پر ترقیاتی کام شروع کریں گے ، زیارت کو سمارٹ ٹورسٹ سٹی کادرجہ دیا گیا ہے ،زیارت میں سیاحوں کے لیے چئیر لفٹ اور پارک بنائیں گے،گوادر کے بعد زیارت بلوچستان کا اہم مقام ہے ان خیالات کاا ظہار صوبائی وزیر پی ایچ ای ،واسا حاجی نورمحمد خان دمڑ نے سنجاوی کے مختلف وفود سے بات چیت کرتے ہوئے کیا ۔صوبائی وزیر نے کہا کہ سنجاوی کو میونسپل کمیٹی کا درجہ دیا گیا ہے،سنجاوی کو ایل پی جی پلانٹ کی منظوری ہوچکی ہے،بی ایچ یو اغبرگ ،بی ایچ یو چوتیر کو آرایچ سی کا درجہ دیا گیا ہے ،ہرنائی وولن ملز کی بحالی کے لیے میں نے اسمبلی میں قرارداد پیش کی جو کہ منظور ہوگئی،سنجاوی تا شاٹ کٹ روڈ پر کام شروع کردیا گیا ہے ،کچھ تا ہرنائی روڈ کی اور کچھ تا زیارت روڈ کی تعمیر ومرمت پر جلد کام شروع کریں گے،ہرنائی تالورالائی روڈ بھی بنائیں گے ،سنجاوی اور ہرنائی کے لیےkv 132 گرڈاسٹیشن منظور کئے ہیں ,سنجاوی میں دولیڈی ڈاکٹرز تعینات کئے گئے ہیں ۔انہوں نے کہا کہ سنجاوی میں ایک بڑا گراونڈ بنائیں گے ،زیارت ،سنجاوی اور ہرنائی میں بلیک ٹاپ روڈوں کی تعمیر ومرمت پر بھرپور توجہ دے رہے ہیں انہوں نے کہا عوام کی خدمت کے لیے ہر وقت کوشاں رہیں گے ۔
()()()
خبرنامہ نمبر218/2019
کوئٹہ 21جنوری :۔صوبائی مشیربرائے لائیو اسٹاک مٹھا خان کاکڑ نے کہا ہے عوامی مسائل ان کی دہلیز پر حل کرنا ہمارا فرض ہے عوام کی خدمت کرنے سے انسان کو ذہنی سکون ملتا ہے انہوں نے ان خیالات کا اظہار ژوب کے دورے پر لوگوں کے مسائل سنتے ہوئے کہا صوبائی حکومت ہر ممکن کوشش کر رہی ہے کہ عوام کو زیادہ سے زیادہ ریلیف مل جائے تاکہ ان کے مسائل کم سے کم ہوجائے جب تک عام لوگوں کو ریلیف نہ مل جائے ہم سکون سے نہیں بیٹھیں گے لیکن بدقسمتی سے سابقہ حکومتوں کی توجہ نہ دے ان کے وجہ سے ضلع ژوب میں مسائل کے انبار لگے ہوئے ہیں شعبہ صحت اور محکمہ تعلیم کو مکمل تباہ کردیئے تمام ہسپتالوں اور اسکولوں کو تباہی کی انتہا پر پہنچ چکے ہیں انہوں نے کہا جب سے اقتدار میں آیا ان شعبوں کو جدید خطوط پر استوار کرنے کے لئے اقدامات کیے جا رہے ہیں تاکہ عوام کو ریلیف مل جائے۔
()()()
خبرنامہ نمبر219/2019 
زیارت21جنوری :۔ڈپٹی کمشنر زیارت قادر بخش پرکانی نے بی ایچ یو زڑگی زیارت کااچانک دورہ کیا ،زڑگی ،سپیزندی زیارت میں جاری انسداد پولیو مہم کا جائزہ لیا ،پولیو ٹیموں کی کارکردگی کو چیک کیااور پولیو مہم کا جائزہ بھی لیا گیا،ڈی سی زیارت نے سپیزندی اور زڑگی کے بچوں کو گھروں سے نکال کر چیک کیا کہ بچوں کو قطرے پلائیں ہے یا نہیں ۔ڈپٹی کمشنر زیارت قادر بخش پرکانی نے پولیو ورکرز کو سخت ہدایت جاری کرتے ہوئے کہا کہ انسدا دپولیو مہم ایک قومی فریضہ ہے اس میں غفلت کی کوئی گنجائش نہیں ،پولیو ورکر گھر گھر جاکر پانچ سال تک کے بچوں کو پولیو کے قطرے ضرور پلائیں ،۔ انہوں نے کہا کہ پولیو امرض کو جڑ سے اکھاڑنے کے لیے ہم سب کو کردار ادا کرنا ہوگا ،پولیو مہم کے سلسلے میں ضلعی انتظامیہ اور محکمہ صحت کے ساتھ بھرپور تعاون کریں۔انہوں نے بی ایچ یو زڑگی کے دورے کے دوران ملازمین کا حاضری رجسٹرچیک کیا اور ہسپتال انتظامیہ کو سخت ہدایت کی پوری جانفشانی سے کام کریں اور مریضوں کو علاج معالجہ اور مفت ادویات کی فراہمی کویقینی بنائیں۔
()()()
خبرنامہ نمبر220/2019 
نصیرآباد21جنوری :۔ڈپٹی کمشنر نصیرآباد قربان علی مگسی نے کہا ہے کہ حکومت پولیو کے خاتمے کے لئے تمام وسائل بروئے کار لارہی ہے پولیو ایک موذی مرض ہے جو ہماری آنے والی نسلوں کو اپاہج بنا رہا ہے اس مرض کا تدارک ناگزیر بن چکا ہے تمام مکتبہ فکر سے تعلق رکھنے والے افراد علماء کرام و دیگر کا فرض بنتا ہے کہ اس قومی مہم میں بڑھ چڑھ کر حصہ لیں تاکہ ہم پاکستان کو پولیو جیسے موذی مرض سے پاک کر سکیں ایک انسان کی جان بچانا پوری انسانیت کو بچانے کے مترادف ہے پانچ سال تک کے بچوں کی قوت مدافعت کو پولیو کا مرض بری طرح کمزور کردیتا ہے جس کے باعث وہ بچہ زندگی بھر کے لئے معذور ہو جاتا ہے اور دوسروں کے سہارے زندگی بسر کرتا رہتا ہے ان خیالات کا اظہار انہوں نے ڈی ایچ او آفس میں بچوں کو پولیو کے قطرے پھیلانے کے موقع پر آفیسران سے خطاب کرتے ہوئے کیا اس موقع پر ڈسٹرکٹ ہیلتھ آفیسر ڈاکٹر عبدالمنان لا کٹی ایم ایس ڈاکٹر ایاز حسین جمالی ڈپٹی ڈی ایچ او ڈاکٹر منظور حسین ابڑو ڈاکٹر عبدالغفار سولنگی اور ڈاکٹر جمیل احمد سمیت دیگر موجود تھے ڈی ایچ او ڈاکٹر عبدالمنان لا کٹی نے بتایا کہ ضلع نصیر آباد میں21سے 24جنوری کوانسداد پولیو مہم شروع ہو رہی ہے تین روزہ پولیو مہم کے دوران ہماری ٹیمیں گھر گھر جا کر بچوں کو پولیو سے بچاؤ کے قطرے پلائیں گی والدین اور دیگر کمیونٹی کو بھی چاہئے کہ وہ پولیو کی ٹیموں کے ساتھ بھرپور تعاون کریں پانچ سال تک کی عمر کے بچوں کو پولیو کے قطرے ضرور پلائیں تاکہ پولیو جیسے خطرناک مرض سے بچاؤ کیا جا سکے ہماری کوشش ہے کہ تین روزہ پولیو مہم کے دوران زیادہ سے زیادہ بچوں کو پولیو کی ویکسین پلا کر صحت مند معاشرے کی تشکیل کی جا سکے اورہرشخص اپنا کلیدی کردار ادا کرتے ہوئے اپنے بچوں کو پولیو کے قطرے پلوائیں تا کہ ان کے بچے عمر بھر کی معذوری سے بچ سکے اس سلسلے میں محکمہ صحت ان کے ساتھ بھرپور تعاون کرے گی صحت مند معاشرہ ہماری اولین ترجیحات کا حصہ ہے۔
()()()
پریس ریلیز 
کوئٹہ 21جنوری :۔میٹروپولیٹن کوئٹہ کے ایک اہم اجلا س بروز سموار مورخہ 22جنوری 2019ء بو قت 11بجے ضباح ہال میٹر و پولیٹن میں ہوگا جس کی صدارت ڈپٹی میئر محمد یو نس بلوچ کریں گے ۔ تمام کوکو نسلران کو بر وقت اجلا س میں شامل ہو سکیں تاکیدکی گئی ہے ۔
()()()

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Post comment