خبرنامہ نمبر 661/2020
دالبندین20فروری :۔وزیراعلیٰ بلوچستان جام کمال خان نے جمعرات کے روز ضلع چاغی کا تفصیلی دورہ کیا، دالبندین میں رخشاں ڈویژن کے ترقیاتی منصوبوں کی پیشرفت اور امن وامان کی صورتحال کے جائزہ اجلاس کے انعقاد کے علاوہ علاقے کے عمائدین سے بھی ملاقات کی، وزیراعلیٰ نے سیندک میٹل پروجیکٹ کا دورہ بھی کیا اور منصوبے کا جائزہ لینے کے علاوہ منصوبے سے متعلق امور کے جائزہ اجلاس کی صدارت بھی کی، وزیراعلیٰ بلوچستان تفتان بھی گئے جہاں انہوں نے پاکستان ہا¶س کا معائنہ کیا اورزائرین سے ملاقات کرکے ان کے مسائل سے آگاہی حاصل کی، وزیراعلیٰ نے تفتان میں عمائدین کے وفد سے ملاقات بھی کی، وزیراعلیٰ ریکوڈک بھی گئے اور مائننگ ایریا کا معائنہ کیا، وہ پہلے وزیراعلیٰ ہیں جنہوں نے ریکوڈک کا دورہ کیا، وزیراعلیٰ نوکنڈی گئے جہاں ان کے اعزاز میں وزیراعلیٰ کوآرڈینیٹر اعجاز سنجرانی نے عصرانہ دیا جس میں علاقے کے عمائدین نے بھی شرکت کی۔
خبرنامہ نمبر 662/2020
دالبندین20فروری :۔وزیراعلیٰ بلوچستان جام کمال خان نے کہا ہے کہ صوبے کے دوردراز اور کم ترقیافتہ علاقوں کی ترقی حکومت کی ترجیحات میں شامل ہے جس کے لئے رواں مالی سال کے بجٹ میں خطیر فنڈز مختص کئے گئے ہیں، ان منصوبوں کی تکمیل سے ان علاقوں کے عوام کو پہلی مرتبہ زندگی کی بنیادی سہولتیں مل سکیں گی، ضلعی افسران ترقیاتی منصوبوں کی بروقت او رمعیاری تکمیل کو ہر صورت یقینی بنائیں، وسائل کا ضیاع کسی صورت برداشت نہیں کیا جائے گا، افسران اپنی جائے تعیناتی پر موجود گی بھی یقینی بنائیں، ان خیالات کا اظہار انہوں نے رخشاں ڈویژن کے ترقیاتی امور اور امن وامان کی صورتحال کے جائزہ اجلاس کے دوران کیا، صوبائی وزیر میر عارف محمد حسنی اور متعلقہ محکموں کے سیکریٹری بھی اجلاس میں شریک تھے، کمشنر رخشاں ڈویژن ایاز مندوخیل نے اجلاس کو بریفنگ دی، وزیراعلیٰ نے کہا کہ رخشاں ایک نیا ڈویژن ہے جس کے قیام کا مقصد علاقے کے عوام کو ان کے مسائل کے فوری حل کی سہولت کی فراہمی ہے تاکہ انہیں اپنے مسائل کے حل کے لئے کوئٹہ نہ جانا پڑے، وزیراعلیٰ نے کہا کہ نئے ڈویژنوں اورضلعوں کے قیام سے انتظامی امور کی انجام دہی بہتر طور پر ہوسکتی ہے، ضرورت اس امر کی ہے کہ افسران اپنے ضلعوں میں رہتے ہوئے عوام کی خدمت کریں اور نچلی سطح پر ان کے مسائل حل کریں، انہوں نے کہا کہ صوبے کی تاریخ میں پہلی مرتبہ تعلیم، صحت اور دیگر محکموں کے اختیارات کی مرکزیت ختم کرتے ہوئے انہیں ڈویژن اور ضلع کی سطح پر منتقل کیا گیا ہے جس سے عوام کے وقت اور پیسے کی بچت ہوگی اور انہیں اپنے مسائل کے لئے دوردراز کا سفر نہیں کرنا پڑے گا، وزیراعلیٰ نے ضلعی انتظامی افسران کو ہدایت کی کہ وہ ایک ٹیم ورک کے طور پر کام کریں اور اپنی توجہ عوامی مسائل پر مرکوز رکھیں، بعدازاں وزیراعلیٰ سے علاقے کے عمائدین اور مختلف شعبوں سے تعلق رکھنے والے لوگوں کے وفد نے ملاقات کی، دالبندین کے عوامی حلقوں نے ضلع میں جاری ترقیاتی عمل پر وزیراعلیٰ اور صوبائی وزیر میر عارف جان محمد حسنی کا شکریہ اداکرتے ہوئے کہا کہ جس وسیع پیمانے پر چاغی میں ترقیاتی منصوبے جاری ہیں ان کی مثال ماضی میں نہیں ملتی۔
خبرنامہ نمبر 663/2020
سیندک20فروری :۔وزیراعلیٰ بلوچستان جام کمال خان نے جمعرات کے روز سیندک کا دورہ کیا اور منصوبے کا جائزہ لیا، منصوبے پر کام کرنے والی چینی کمپنی میٹرولوجیکل کارپوریشن آف چائنا کے حکام کی جانب سے وزیراعلیٰ کو بریفنگ دی گئی، وزیراعلیٰ نے سیندک پروجیکٹ کے امور کے جائزہ کے لئے منعقدہ اجلاس کی صدارت بھی کی، سیندک میٹل پروجیکٹ کے چیئرمین رازق سنجرانی اور ایم سی سی حکام کی جانب سے وزیراعلیٰ کو پروجیکٹ کے امور پر بریفنگ دی گئی، اس موقع پر اظہار خیال کرتے ہوئے وزیراعلیٰ نے کہا کہ سیندک بلوچستان کا اہم معدنی منصوبہ ہے، صوبائی حکومت سیندک منصوبے کے معاہدے کی توسیع میں بلوچستان کے حقوق ومفادات کے تحفظ کو یقینی بنانا چاہتی ہے، انہوں نے کہا کہ کچھ عرصہ قبل ایم سی سی کے صدر اور دیگر حکام نے ان سے کوئٹہ میں ملاقات کی تھی جس میں معاہدے کی توسیع سے متعلق بات چیت کی گئی تھی اور فیصلہ کیا گیا تھا کہ متعلقہ صوبائی حکام پر مشتمل کمیٹی چینی کمپنی کے حکام کے ساتھ اجلاس منعقد کرکے معاہدے کی توسیع کے حوالے سے سفارشات تیار کرے گی، وزیراعلیٰ نے توقع ظاہر کی کہ چینی کمپنی بہتر تجاویز سامنے لائے گی، انہوں نے کہا کہ بلوچستان کے وسائل کے حوالے سے کوئی بھی فیصلہ جلد بازی میں نہیں کیا جائے گا اور معدنی وسائل کے معاہدوں کے تمام پہلو¶ں کا تفصیلی جائزہ لیا جائے گا اور باہمی رضامندی اور اعتماد کے ساتھ فیصلے کئے جائیں گے، صوبائی وزیر میر عارف جان محمد حسنی بھی اجلاس میں شریک تھے۔
خبرنامہ نمبر 664/2020
تفتان20فروری :۔وزیراعلیٰ بلوچستان جام کمال خان نے پاکستان ہا¶س میں زائرین کے لئے تمام ضروریات اور سہولیات کی فراہمی کو یقینی بنانے اور اس حوالے سے کمشنر رخشاں ڈویژن کو تفصیلی رپورٹ پیش کرنے کی ہدایت کی ہے، جمعرات کے روز پاکستان ہا¶س کے معائنہ کے موقع پر وہاں موجود زائرین سے بات چیت کرتے ہوئے وزیراعلیٰ نے کہا کہ زائرین کو سہولیات اور تحفظ کی فراہمی حکومت کی ذمہ داری ہے جس کے لئے خطیر فنڈز صرف کئے جارہے ہیں، اس موقع پر زائرین کی جانب سے وزیراعلیٰ کو بعض مسائل سے آگاہ کرتے ہوئے ان کے حل کی درخواست کی گئی، وزیراعلیٰ نے ریسٹ ہا¶س کی تعمیر کے منصوبے کےا سنگ بنیاد بھی رکھا، سیکریٹری مواصلات وتعمیرات نورالامین مینگل نے وزیراعلیٰ کو منصوبے کے بارے میں بریفنگ دی، وزیراعلیٰ نے پاک ایران بارڈر کا دورہ بھی کیا اور وہاں سفری اور تجارتی سہولتوں کا جائزہ لیا، سیکریٹری صنعت حافظ عبدالماجد نے وزیراعلیٰ کو بریفنگ دی۔ وزیراعلیٰ سے علاقے کے عمائدین کے وفد نے بھی ملاقات کی اور انہیں بعض مسائل سے آگاہ کرتے ہوئے ان کے حل کی درخواست کی۔ وزیراعلیٰ نے کمشنر رخشاں ڈویژن کو مسائل کے فوری حل کے لئے اقدامات کرنے کی ہدایت کی۔
خبرنامہ نمبر 665/2020
ریکوڈک 20فروری :۔وزیراعلیٰ بلوچستان جال کمال خان نے ریکوڈک کے مائننگ ایریا کا دورہ کیا، وہ ریکوڈک کا دورہ کرنے والے پہلے وزیراعلیٰ ہیں، صوبائی وزیر میر عارف جان محمد حسنی، سیکریٹری معدنیات ظفر بخاری، سیکریٹری مواصلات وتعمیرات، سیکریٹری کھیل، سیکریٹری صنعت بھی وزیراعلیٰ کے ہمراہ تھے، ریکوڈک پہنچنے پر ڈائریکٹر جنرل مائنز، ان کی ٹیم اور علاقے کے عمائدین نے وزیراعلیٰ کا استقبال کیا، اس موقع پر وزیراعلیٰ نے مائننگ ایریا کا جائزہ لیا جہاں انہیں سیکریٹری معدنیات نے بریفنگ دی، اس موقع پر بات چیت کرتے ہوئے وزیراعلیٰ نے مائننگ ایریا کی ترقی میں گہری دلچسپی کا اظہار کرتے ہوئے محکمہ معدنیات کے حکام کو ہدایت کی کہ ریکوڈک کی ترقی کے قابل عمل، صوبے اور مقامی لوگوں کے مفاد کے حامل منصوبوں کی تجاویز فوری طور پر پیش کی جائیں، مقامی عمائدین سے ملاقات کے دوران وزیراعلیٰ نے کہا کہ وہ ضلع چاغی اور ریکوڈک کی پسماندگی سے بخوبی آگاہ ہیں، ریکوڈک کاپر اینڈ گولڈ اور قدرتی وسائل بلوچستان کے لوگوں کی میراث ہیں، انہوں نے کہا کہ چاغی کا شمار ان خطوں میں ہوتا ہے جو انتہائی قیمتی معدنیات سے مالامال ہیں اپنے جغرافیائی محل وقوع کے باعث چاغی سینٹرل ایشیاءایران اور یورپ کو ملانے کا گیٹ وے ہے، جہاں پاکستان اور ایران کے درمیان ریل نیٹ ورک بھی موجود ہے، معتبرین سے بلوچی زبان میں بات چیت کرتے ہوئے وزیراعلیٰ نے انہیں یقین دلایا کہ ریکوڈک اور ضلع چاغی کے تمام بنیادی مسائل کو ترجیحی بنیادوں پر حل کیا جائے گا اور علاقے کے قدرتی وسائل کو بلوچستان کے عوام اور مقامی آبادی کی ترقی اور فلاح وبہبود کے لئے بروئے کار لایا جائے گا۔
خبرنامہ نمبر 666/2020
سیندک20فروری :۔وزیراعلیٰ بلوچستان جام کمال خان نے چین میں کرونا وائرس سے ہونے والی اموات پر دکھ اور افسوس اور چین کے عوام سے ہمدردی اور یکجہتی کا اظہار کیا ہے، سیندک کے دورے کے موقع پر چینی کمپنی ایم سی سی کے حکام سے بات چیت کرتے ہوئے وزیراعلیٰ نے کہا کہ چین میں کرونا وائرس کے نتیجے میں ہونے والی اموات اور ہزاروں افراد کے متاثر ہونے پر انہیں دکھ پہنچا ہے، بلوچستان کے عوام مشکل کی اس گھڑی میںچینی عوام کے ساتھ ہیں اور ان کے دکھ میں برابر کے شریک ہیں، وزیراعلیٰ نے کرونا وائرس کے خاتمے کے لئے چینی حکومت کے اقدامات کو سراہتے ہوئے یقین ظاہر کیا کہ ان اقدامات کے نتیجے میں جلد کرونا وائرس پر قابو پالیا جائے گا۔
خبرنامہ نمبر 667/2020
کراچی 20فروری :۔صوبائی وزیرِ داخلہ بلوچستان میر ضیاءاللہ لانگو نے کہا ہے کہ اپوزیشن کا احتجاج سمجھ سے بالاتر ہے۔ یہ محض ٹوپی ڈرامے کے علا¶ہ کچھ نہیں۔ انہوں نے کہا کہ اپوزیشن جماعتوں کو حکومتی وزراءکے برابر فنڈز اور سکیمیں دی گئیں ہیں۔ صوبے کے امن اور ترقی سے خائف لوگ عوام کو نظام سے مایوس کرنا چاہتے ہیں۔ صوبائی حکومت کے دروازے تمام شہریوں کیلیے ہروقت کھلے ہیں۔ پورے دن سول سیکرٹریٹ میں صوبائی وزراءاور عوامی نمائندے عوام کے مسائل سنتے اور انکے حل کیلئے احکامات جاری کرتے ہیں۔ میر ضیاءاللہ لانگو نے کہا کہ سیکیورٹی فورسز اور عوام کی قربانیوں سے صوبے میں امن کی فضا قائم کرنے میں کامیابیاں حاصل کی ہے۔ بد قسمتی سے حزب اختلاف کے چند نمائندوں کو بلوچستان میں امن ہضم نہیں ہو پارہا۔ صوبائی حکومت کی کامیاب عوامی پالیسیوں اور عوام دوست پی ایس ڈی سکیموں سے خائف یہ عناصر صوبے کو پتھر کے دور میں لے جانے پر تلے ہوئے ہیں جسے کسی صورت کامیاب نہیں ہونے دیا جائے گا۔ صوبائی وزیرِ نے کہا کہ جمہوری لوگ ہیں اور جمہوری روایات کا پاس رکھتے ہیں۔ احتجاج سب کا جمہوری حق ہے تاہم احتجاج کی آڑ میں افراتفری پھیلانے کی کسی کو اجازت نہیں دیں گے۔ میری حزب اختلاف کے دوستوں سے درخواست ہے کہ صوبائی اسمبلی کے فلور کو اپنے مسائل کے حل کیلیے استعمال کریں انہوں نے کہا ہے کہ بلوچستان کے حالات خراب کرنے کے پیچھے بیرونی قوت ملوث ہے جو کہ اپنے مقاصد کے حصول کیلئے بلوچستان میں بدامنی پھیلا رہی ہیں اور یہ ملک دشمن غیر ملکی ادارے ایک منظم سازش کے تحت یہاں امن و امان کو تباہ کرنا چاہتے ہیں تاکہ بلوچستان کا امن بحال نہ ہو سکے ہم امن و امان کے بحالی کے لیے تمام وسائل کو بروئے کار لا رہے ہیں اور اس سے نمٹنے کے لیے ہمیں یہ تعین بھی کرنا ہوگا کے پاکستان کے خلاف کون جنگ لڑ رہا ہے اور پاکستان کے لیے جنگ کون لڑ رہا ہے
خبرنامہ نمبر 668/2020
کوئٹہ 20فروری :۔گورنر بلوچستان امان اللہ خان یاسین زئی نے مادری زبانوں کے عالمی دن کے حوالے سے اپنے پیغام میں کہا ہے کہ مادری زبان صرف اظہار کا وسیلہ نہیں بلکہ ایک نسل کو وراثت کے منتقلی کا طویل سلسلہ ہے۔ ماضی کی ثقافت اور اس کی تسلسل میں آنے والی آج کی تہذیب سے ہی نئے مستقبل کی تعمیر کی جاسکتی ہے ۔گورنر یاسین زئی نے کہا ہے مادری زبان میں تعلیم کا حصول ہر انسان کا بنیادی حق ہے جس کی ضمانت اقوام متحدہ کے چارٹر سے لے کر پاکستان کے 1973 کا آئین فراہم کرتا ہے ۔انہوں نے کہا کہ مادری زبان کو ذریعہ تعلیم بنانے سے نہ صرف بچوں کی پوشیدہ تخلیقی صلاحیتوں میں نکھار پیدا کیا جا سکتا ہے بلکہ اس سے خود زبان کی ترویج و اشاعت بھی ہوتی ہے مادری زبانوں کو ذریعہ تعلیم بنانے سے بچوں کو چیزیںجانچنے اور پرکھنے میں آسانی ہوگی جس سے وقت، توانائی اور پیسہ کاضیاع بھی نہیں ہوگا ۔انہوں نے تمام اہل علم و دانش پر زور دیا کہ وہ دنیا کی ترقی یافتہ زبانوں میں قیمتی علمی و سائنسی مواد کو اپنی اپنی مادری زبانوںمیں ترجمہ کرائیں تاکہ نئی نسل کے ازہان کو جدید تحقیق و تخلیق سے روشن کرنے کی راہ ہموار ہو سکیں انہوں نے کہا کہ گذشتہ حکومت نے مادری زبانوں کو نصاب کا حصہ بنانے کا دانشمندانہ فیصلہ کیا ضروری ہے کہ اٹھارویں ترمیم کے ذریعہ صوبوں کو منتقل کئے گئے اختیارات سے بھرپور استفادہ کریں
خبرنامہ نمبر 669/2020
کوئٹہ 20فروری :۔محکمہ پولیس کے ایک پریس ریلیز کے مطابق کوئٹہ شہر میں پتنگ بازی پر مکمل پابندی عائد ہے اس پابندی پر عملدارآمد کرتے ہوئے کوئٹہ شہر میں پتنگ اڑانے فروخت کرنے اور دھاتی ڈور بیچنے والوں کے خلاف سخت قانونی کاروائی عمل میں لائے جائے گی اس خونی کھیل کے حوالے سے شہر میں کوئی انسانی نقصان یا حادثہ ہوا تو اس کے ذمہ دار پتنگ اڑانے والے ،پتنگ اور دھاتی ڈور فروخت کرنے والوںپر براہ راست ایف آئی آر درج کرکے قانونی کاروائی عمل میں لائی جائے گی پریس ریلیز میں کہاگیاہے کہ شہر سے باہر کھلے علاقوں میں پتنگ اڑانے پر کوئی پابندی نہیں ہو گی جبکہ شہر میں اس خونی کھیل پتنگ بازی اور دھاتی ڈور کے استعمال سے کئی حادثات ہوتے ہیں اور سینکڑوں نوجوان کی موت واقع ہوتی ہے یا عمر بھر کیلئے معذورہو جاتے ہیں۔
خبرنامہ نمبر 670/2020
کوئٹہ 20فروری :۔صوبائی وزیر خزانہ ظہور احمد بلیدی نے کہا ہے کہ دنیا میں قوموں کی ترقی کا راز مادری زبانوں میں تعلیم دینے میں پوشیدہ ہے پاکستان کی ترقی کی راہ میں حائل رکاوٹوں میں جہاں دوسرے عوامل کار فرما ہے وہیں پر غیر زبان میں تعلیم دینا بھی سب سے بڑی رکاوٹ ہے بچے اپنے مادری زبانوں میں بہت جلد سیکھتے ہیں لہذا مادری زبانوں میں تعلیم دینے کی جتنی بھی قانون سازی ہوئی اس پر مزید کام کرنے کی ضرورت ہے ان خیالات کا اظہار انہوں نے مادری زبانوں کی عالمی دن کی مناسبت سے ایک پیغام میں نے کیاانہوںنے کہاکہ صوبائی حکومت جام کمال کی رہنمائی میں صوبے میں تمام ادھورے مثبت کاموں کی تکمیل پر یقین رکھتی ہے اور مادری زبانوں میں تعلیم دینے سے متعلق کی گئی قانون سازی کو آگے بڑھائے گی تاکہ صوبے میں مادری زبانوں کی بقا کو لاحق خطرات کو کم کیا جاسکے انہوں نے کہا کہ بلوچستان ادب، ثقافت، تہذیب وتمدن اور مادری زبانوں کی خوبصورتی سے مالامال خطہ ہے۔ ضرورت اس امر کی ہے کہ ان کی حفاظت کی جائے اور صوبائی حکومت ادب ،ثقافت ،تہذیب اور مادری زبانوں کی ترقی و ترویج کے لیے اپنی ذمہ داریوں سے غافل نہیں۔ صوبائی وزیر نے کہا کہ زندہ قومیں اس دن کو پر جوش انداز سے مناتی ہے اور یہ ہم سب کی ذمہ داری ہے کہ نسل نو کومادری زبانوں سے روشناس کرائیں ہمارے ادباءشعراءاورمفکر وں کو اپنے متعلقہ زبانوں میں سائنس ٹیکنالوجی تکنیکی تعلیم پر تحقیقی کام کو تیز کریں اور نتائج رجحانات کو مادری زبانوں میں متعارف کرائیںتاکہ نسلوںنوکو حصول علم میں آسانی ہو۔
خبرنامہ نمبر 671/2020
کوئٹہ 20فروری :۔محکمہ ریونیو حکومت بلو چستان کے ایک اعلامیہ کئے مطابق عدالتی احکامات کی روشنی میں 16جون 2014کا اعلامیہ بحوالہ تبدیلی نام سب ڈویژن خالق آباد کو واپس لے لیاگیا ہے اور سب ڈیژن خالق آباد ضلع قلات کا پرانا نام منگوچر ضلع قلات بحال کر دیا گیا ہے ۔
خبرنامہ نمبر 668/2020
لسبیلہ20فروری :۔ ڈپٹی کمشنر لسبیلہ حسن وقار چیمہ کے زیرنگرانی ڈسٹرکٹ ایجوکیشن اتھارٹی کا اجلاس ڈی سی آفس میں منعقد ہوا، اجلاس میں ڈسٹرکٹ ایجوکیشن افیسر حاجی نوید احمد نے محکمہ تعلیم کے ملازمین کے مختلف امور کے حوالے سے ڈپٹی کمشنر سے تبادلہ خیال کیا، اجلاس میں تعلیمی اداروں کے مسائل اور ملازمین کے امور کے حوالے سے اہم فیصلے کئے گئے ڈپٹی کمشنر لسبیلہ نے اجلاس میں محکمہ تعلیم کے افسران کو احکامات جاری کیں کہ ملازمین کی رخصتی سمیت دیگر اہم دفتری امور سے متعلق گزشتہ فیصلوں کی کاروائی کے منٹس بھی آئندہ اجلاس میں پیش کئے جائیں تاکہ محکمہ تعلیم میں اصلاحات کے حوالے سے بہتر فیصلے کئے جاسکیں،،بعدازاں ڈپٹی کمشنر لسبیلہ نے اوتھل لاکھڑا روڈ پر جاری ترقیاتی منصوبے کے مختلف سیکشن کا معائنہ کیا،ڈپٹی کمشنر نے لاکھڑا دورے کے موقع پر سیکریٹری یونین کونسل کی غیرحاضری کا نوٹس لیا،، انھوں نے تحصیل لاکھڑا رورل ہییلتھ سینٹر کا دورہ کیاور طبی سہولیات فراہمی کا جائزہ لیا،، ڈپٹی کمشنر نے اس موقع پراحکامات بھی جاری کیں اور کہا کہ طبی سہولیات فراہمی کے حوالے سے کوئی سمجھوتہ نہیں کرینگے جو بھی ملازمین ڈیوٹی سے غیر حاضر پائے گئے انکے خلاف کاروائی عمل میں لائی جائیگی ا ور اس معاملے میں کوئی تساہل برداشت نہیں کیاجائیگا۔
خبرنامہ نمبر 672/2020
لسبیلہ20فروری :۔اسسٹنٹ کمشنر روحانہ گل کاکڑ نے قومی شاہراہ N25 پر روڈ سیفٹی کے حوالے سے ڈی ایس پی موٹروے پولیس حب ریجن را¶ اقبال کے ساتھ دفتر میں میٹنگ منعقد کی،اورقومی شاہراہ پر حب سے وندر تک مال بردار ٹرانسپورٹ اور مسافر کوچز چلانےوالے ڈرائیورز کو ہائیوے قوانین سے متعلق آگہی دینے کے حوالے سے اقدامات اٹھانے کا فیصلہ کیا ڈی ایس پی موٹر وے پولیس را¶ اقبال نے اسسٹنٹ کمشنرحب کو نیشنل ہائیوے۷ آرڈیننس اور قومی شاہراہ پر روڈ سیفٹی کے حوالے سےمروجہ قوانین کے بارے میں بریفنگ دی،اسسٹنٹ کمشنر حب کو بریفنگ میں بتایاگیا کہ تیز رفتارہیوی گاڑیوں اور مسافر کوچز کی جانب سے لگائی گئی سرچ لائٹس کی وجہ سے حادثات پیش آتے ہیں سرچ لائٹس کے خلاف کاروائی اور موٹروے قوانین کی خلاف ورزی کرنے والوں پر جرمانے عائد کرنے کا فیصلہ کیا گیااسسٹنٹ کمشنر حب روحانہ گل کاکڑ نے کہا کہ قومی شاہراہ پر ٹریول کرنےوالے مسافروں اور ڈرائیوروں کے لئے روڈ سیفٹی کے حوالے سے آگہی مہم چلانےکی ضرورت ہے انھوں نے کہا کہ موٹروے پولیس کو چاہیے کہ وہ ہائیوے قوانین پر عملدرآمد کیساتھ لنک روڈ ز پر اسپیڈ بریکرز بھی قائم کریں خصوصا گڈانی موڈ ڈام بندر روڈ اور دیگر اہم مقامات کی نشاندہی کریں اور وہاں اسپیڈبریکرز لگانے کیلئے این ایچ اے کو پابند کیا جائیگا اے سی حب نے کہا کہ حکومت بلوچستان نے قومی شاہراہوں پر ایمرجنسی ریسکیو سینٹر زقائم کئے ہیں ہماری اولین ترجیح یہ ہے کہ قومی شاہراہ پر روڈ سیفٹی کے مروجہ قوانین پرعملدرآمد کرکے انسانی جانوں کا تحفظ یقینی بنایا جائے۔
خبرنامہ نمبر 673/2020
نصیر آباد 20فرروی :۔ڈپٹی کمشنر نصیرآباد ظفر علی ایم شہی نے گورنمنٹ اسپیشل ہائی سکول ڈیرہ مراد جمالی میں جاری میٹرک کے امتحانی سینٹر کااچانک دورہ کر کے ہونے والے امتحانات کا جائزہ لیا سپرنٹنڈنٹ نے انہیں امتحانی سینٹر میں بچوں کے امتحانات کے متعلق آگاہی فراہم کی ضلعی انتظامیہ کی طرف سے نقل کی روک تھام کےلئے سکیورٹی انتظامات بھی سخت کر دیئے گئے تھے غیر متعلقہ افرادکی روک تھام کےلئے سخت چیکنگ کے مراحل سے گزارہ گیا سینٹر کے اردگرد غیر متعلقہ افراد کی نقل حرکت پر پابندی لگائی گئی تھی ڈپٹی کمشنر نصیر آباد ظفر علی ایم شہی نے انہیں سختی سے ہدایات دیں کہ نقل کے خلاف کاروائی کے عمل میں تیزی لائی جائے اس نا سور کے خاتمے تک ہم صحیح معنوں میں علم کی شمع روشن نہیں کر سکتے نقل وہ نا سور ہے جو ہماری نسلوں کو پڑھا لکھا جاہل بنا دیتی ہے ہم ہر گز اپنے بچوں کو نقل کے سہارے ڈگری ہولڈر نہیں بنانا چاہتے اس زمین میں اگر کوئی بھی طالبعلم نقل کرتا ہوا پایا جائے تو اس کے خلاف سخت کاروائی عمل میں لائی جائے لاپر واہی برتنے والے نگرانوں کو بھی نہیں بخشا جائے گا انہوں کہ کہا کہ نقل جیسے ناسور سے چھٹکارا حاصل کرنا ہوگا کسی کو نقل کرنے کی اجازت نہیں دی جائے گی امتحانی حال کے قریب غیرمتعلقہ افراد کے داخلے پر مکمل پابندی ہے کسی بھی صورت نقل کرنے کی اجازت نہیں دی جائے گی جو بھی افرادنقل کرتے یا نقل فراہم کرتے ہوئے پکڑے گئے تو ان کے خلاف کاروائی عمل میں لائی جائے گی نقل ایک ناسور ہے جو ہمارے پڑھے جوانوں کو تباہی کے دہانے پر لاکھڑاکرنا چاہتی ہے انہوںنے کہاکہ حکومت کی بھرپور کوشش ہے کہ تعلیم کے نظام میں بہتری لائی جائے اور نقل جیسی لعنت کو ہمیشہ کے لیے ختم کرکے ایک روشن مستقبل کی بنیاد ڈال کر علم کی روشنی کو عام کیا جائے۔

خبرنامہ نمبر 674/2020
نصیر آباد 20فرروی :۔ڈی آئی جی نصیرآباد شہاب عظیم لہڑی کی جانب سے ٹرانسفر ہونے والے کمشنر نصیرآباد جاویداخترمحمود کے اعزاز میںالوداعی ظہرانہ دیا گیا ظہرانے میں ڈپٹی کمشنرز ظفرعلی ایم شہی،آغاشیرزمان خان ،محمد یونس سنجرانی، ایس ایس عرفان بشیر،ایس ایس پی جعفرآباد سیدعلی آصف شاہ،ڈی ایس پی ملک عبدالغفارسیلاچی،ڈویژنل ڈائریکٹرسوشل ویلفیئرسلیم کھوسہ ،اے ڈی آئی جی امیر جان مگسی،سپرنٹنڈنٹ حاجی صلاح الدین بہرانی، ایکسئن بی اینڈ آر جعفر آباد ظفر علی کھوسہ،تحصیلدار بہادر حسین کھوسہ خادم حسین بہرانی، پی آراو ممتازعلی پندرانی سمیت دیگر آفیسرا ن نے شرکت کی الوداعی تقریب میں ڈی آئی جی شہاب عظیم لہڑی اور ڈپٹی کمشنر نصیر آباد ظفر علی ایم شہی نے ٹرانسفر ہونے والے کمشنر نصیر آباد ڈویژن جاوید اختر محمود کو روایتی ٹو پی اجرک پہنائی ظہرانے کی تقریب سے ڈی آئی جی نصیر آباد شہاب عظیم لہڑی نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ تبادلہ ہونے والے کمشنر جاوید اختر محمودنے ہمیشہ محکمہ پولیس کے ساتھ اپنے تعاون کو یقینی بنایا ا ور سول انتظامیہ کی رہنمائی سے ہی محکمہ پولیس احسن طریقے سے اپنے فرائض سر انجام دے رہی ہے محکمہ پولیس اور سول انتظامیہ کا چولی دامن کا ساتھ ہے ہم سب کا مقصد عوا م کی مشکلات کو حل کرنا ہے اور ان کی جان و مال کے تحفظ اور سر کاری سطح پر عوامی شکایات کے ازالے کے لیئے ایک ٹیم ورک کی طرح کام کرنا ہو تا ہے کمشنر جاوید اختر محمود کی خدمات کو نصیر آباد کے لیئے ہمیشہ یاد رکھا جائے گا تقریب سے تبادلہ ہونے والے کمشنر جاوید اختر محمود نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ میں نے اپنی مدت ملازمت کے دوران نصیر آباد ڈویژن کی ترقی اور عوام کی فلاح و بہبو د کے لیئے بھر پور کوششیں کی اور سرکاری اداروں کی بہتری لانے کے لیئے ہر ممکن وسائل کو بروئے کار لایا گیا میرے ماتحت آفیسران نے میری بھر پور رہنمائی کرتے ہوئے علاقے کی تعمیر و ترقی اور سر کاری اداروں کی معاونت کے زریعے عوامی مسائل کو موثر انداز میں حل کیا انہوں نے کہا کہ نصیر آبا دکی عوام کا بھی شکر گزار ہوں کہ انہوں نے ہر سطح پرمیرے ساتھ تعاون کو یقینی بنایا ٹرانسفر اور پوسٹنگ ملازمت کا حصہ ہوتا ہے یہاں کی عوام کے پیار اور محبت کو ہمیشہ یاد رکھو گا امید ہے کہ تمام سرکاری آفیسران اپنے متعلقہ علاقوں کے مسائل کو حل کرنے اور عوامی مشکلات میںکمی لانے کے لیئے ہر ممکن اپنا مثبت کردار ادا کرتے رہیں گے ۔
خبرنامہ نمبر 675/2020
کوہلو20فروری :۔کوہلو میں میٹرک کے امتحانات مختلف سینٹروں میں جاری ہیں گزشتہ روز اسسٹنٹ ڈائریکٹر ایجوکیشن سبی زون میر شمس مری نے اچانک مختلف سینٹروں کا دورہ کیا ہے انہوں نے ضلع میں امتحانی مراکز پر نقل کی روک تھام کے اقدامات کا جائزہ لیا ہے اس موقع پر گفتگو کرتے ہوئے اسسٹنٹ ڈائریکٹر ایجوکیشن میر شمس مری نے کہا ہے کہ نقل ایک ناسور ہے جس کا خاتمہ ناگزیر ہوچکا ہے نقل سے ناصرف ایک بچے بلکہ پورے معاشرے کی آنے والی نسلیں تباہ ہوجاتی ہیں صوبے کے بچوں میں ٹیلنٹ کی کمی نہیں ہے تاہم ضرورت اس امر کی ہے کہ انہیں سہولیات فراہم کرکے تعلیم کی طرف متوجہ کیا جائے ۔ایک پڑھی لکھی نسل کے بغیر معاشرے میں ترقی کا تصور ناممکن ہے یہ بچے ہی ہمارے آنے والے مستقبل کے معمار ہیں اسسٹنٹ ڈائریکٹر ایجوکیشن نے امتحانات کی نگرانی کرنے والے سٹاف کو ہدایت کی کہ امتحانی ماحول پرسکون رہے اور امتحانی تقاضوں کے مطابق منعقد ہوں نقل کے روک تھام کےلئے اقدامات کو یقینی بنایا جائے ۔
انتقال پر ملال
مرحوم میر عنایت اللہ خان گچکی کی بیوہ ڈاکٹر چنگیز گچکی ایس ای سی اینڈ ڈبلیو میر ظفر اللہ گچکی مرحوم جہانزیب گچکی کی والدہ جمرات کو حرکت قلب بند ہونے سے کراچی میں انتقال کر گئیں اُنہیں اُنکے آبائی گا¶ں سوردو پنجگور کے قبرستان میں جمعہ کو سپردخاک کیا جائے گا جبکہ اُنکی فاتحہ خوانی اُنکے آبائی گھر سوردو میں لی جائیگی مرحومہ مرحوم وڈیرہ سردار نور محمد بنگلزئی کی بیٹی اور مرحوم حاجی سلطان احمد بنگلزئی آغا نصیر احمد بنگلزئی آغا شیر احمد بنگلزئی کی بہن اور مرحوم خان آف قلات میر احمد یار خان کی بھانجی سابق وزیر اعلیٰ چیف آف سروان نواب اسلم خان رئیسانی اور ڈاکٹر مسعود نوشیروانی کی خوشدامن اور مرحوم شہزادہ فاروق احمدزئی شہزادہ لال جان احمد زئی ,شہزادہ فرحت احمدزئی اور شہزادہ ذوالفقار احمد زئی کی پھوپھی تھیں۔
خبرنامہ نمبر 676/2020
کوئٹہ 20فروری :۔وزیراعلیٰ بلوچستان جام کمال خان نے اسسٹنٹ کمشنر چاغی عائشہ زہری کی سرکاری فرائض کی ادائیگی اور کارکردگی کو سراہا ہے دورہ دالبندین کے دوران اے سی چاغی سے بات چیت کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ ضلع میں امن کے قیام اور سماج دشمن عناصر کے خلاف بھرپور کاروائی سے اے سی چاغی نے خود کو اہل اور با صلاحیت افسر ثابت کیا ہے اور خاتون ہونے کے باوجود انہوں نے سماج دشمن عناصر کے خلاف کاروائی کر کے ایک اعلیٰ اور قابل تقلید مثال قائم کی ہے اسسٹنٹ کمشنر نے تعریفی کلمات اور حوصلہ افزائی پر وزیراعلیٰ کا شکریہ ادا کرتے ہوئے یقین دلایا کہ وہ اپنی کاکر دگی کو برقرار رکھیں گی۔
خبرنامہ نمبر 677/2020
کوئٹہ 20فروری :۔وزیراعلیٰ بلوچستان جام کمال خان نے سردار ظفراللہ گچکی اور ڈاکٹر چنگیز گچکی کی والدہ سابق وزیراعلیٰ نواب اسلم خان رئیسانی کی خوش دامن کے انتقال پر دکھ اور افسوس کا اظہار کیا ہے اپنے ایک تعزیتی بیان میں انہوں نے دعا کی ہے کہ اللہ تعالیٰ مرحومہ کو اپنے جوار رحمت میں جگہ دے اور سوگوار خاندان کو صبر جمیل عطا کرے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Post comment