خبرنامہ نمبر469/2019 
کوئٹہ 10فروری:۔وزیراعلیٰ بلوچستان جام کمال خان نے کہا ہے کہ گذشتہ صدی کے آئینہ میں براعظم ایشیا کی تاریخ پر نظر ڈالی جائے تو یہ کہنا بے جا نہ ہوگا کہ اس تمام عرصہ میں انقلاب ایران ایک تاریخی اہمیت رکھتا ہے، سید آیت اللہ روح اللہ خمینی وہ تاریخ ساز نام ہے جس نے انقلاب کی جنگ استقامت کے ساتھ لڑی اور ایرانی قوم کو فتح سے ہمکنار کیا۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے انقلاب ایران کی چالیسویں سالگرہ کے موقع پر ایرانی قونصلیٹ میں منعقدہ تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ ڈپٹی اسپیکر قومی اسمبلی قاسم خان سوری بھی تقریب میں موجود تھے۔وزیراعلیٰ نے کہا کہ ایران اور پاکستان کے درمیان عظیم سیاسی، ثقافتی اور معاشی تعلقات ہیں اور ہمسایہ ہونے کے ساتھ ساتھ ہمارے درمیان دین اسلام کا مضبوط رشتہ بھی ہے ، ہرمشکل وقت میں دونوں ممالک نے ہمیشہ ایک دوسرے کا بھرپور ساتھ دیاہے ، ایران پہلا ملک تھا جس نے پاکستان کو تسلیم کیا، جس کی پوری پاکستانی قوم دل سے قدر کرتی ہے۔انہوں نے کہا کہ یہ امر انتہائی خوش آئند ہے کہ دونوں ممالک کی سیاسی قیادت ان تعلقات کو مزید وسعت دینے اور مستحکم بنانے کے لئے پر عزم ہے اور باہمی تجارت کے ہدف کو پانچ ارب ڈالر تک لے جانا چاہتی ہے۔وزیراعلیٰ نے کہا کہ آج کی دنیا میں ملکوں کے درمیان تعلقات معیشت کی بنیاد پر دیکھے جاتے ہیں اور جن ممالک کے درمیان معاشی تعلقات بہتر ہوتے ہیں دنیا انہیں قدر کی نگاہ سے دیکھتی ہے۔وزیراعلیٰ نے کہا کہ ایران اور پاکستان کے درمیان معاشی تعلقات کو وسیع کرنے کی بے پناہ گنجائش موجود ہے جس میں سیستان بلوچستان اور بلوچستان اہم کردار ادا کرسکتے ہیں وزیراعلیٰ نے کہا کہ ایران اور پاکستان کے درمیان معاشی تعلقات کے فروغ سے دونوں ممالک بالخصوص سیستان بلوچستان اور بلوچستان کے عوام کو بہت فائدہ پہنچے گا اور ان کی معاشی حالت بہتر ہوگی وزیراعلیٰ نے اس یقین کا اظہار کیا کہ آنے والا دور پاک ایران کے تعلقات کے فروغ اور دونوں ممالک کی ترقی اور خوشحالی کا دور ہوگا اور وہ ایران کے عوام کی ترقی اور خوشحالی کے لئے دعا گو ہیں۔قبل ازیں وزیراعلیٰ ء ڈپٹی اسپیکر قومی اسمبلی اور قونصل جنرل ایران نے انقلاب ایران کی سالگرہ کا کیک کاٹا وزیراعلیٰ نیاس موقع پر لگائی گئی تصویری نمائیش اور ایرانی مصنوعات کے سٹال کا معائنہ بھی کیا۔
()()()
پریس ریلیز 
کوئٹہ 10فروری :۔حاجی عصمت اللہ بازئی کے فرزند سیف اللہ بازئی ،عزیز اللہ بازئی ،اسد اللہ بازئی اور قدیم اللہ بازئی ،کے بھائی فرید اللہ بازئی انتقال کر گئے ۔وہ امان اللہ بازئی اور سعداللہ بازئی اور عنایت اللہ بازئی کے بھتیجے تھے ۔وہ ڈاکٹر شمس بازئی ،سنیٹر نصیب اللہ بازئی ،ڈاکٹر ثناء اللہ بازئی اور جمعیت علما ء اسلام کے صوبائی معا ون خصوصی حاجی احمل خان بازئی کے چحا زاد بھائی تھے ۔وہ عبدالطیف بازئی ،حاجی عبدالعلیم بازئی اور حضرت علی بازئی کے بر ادر تھے ۔فاتحہ خوانی کلی نو حصار میں جاری ہے ۔
()()()

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Post comment