HomeNews01-07-2019 Monday (File No.1)

01-07-2019 Monday (File No.1)

01-07-2019 Monday (File No.1)

خبر نامہ نمبر 2122/2019
کوئٹہ یکم جولائی ۔ وزیر اعلیٰ بلوچستان کے مشیر برائے ثانوی تعلیم حاجی محمد خان لہڑی نے کہا ہے کہ صوبے کے دور دراز علاقوں کے اسکولوں کو سہولیات کی فراہمی یقینی بنائی جارہی ہے۔لہٰذاجامع منصوبہ بندی اور مو ثر حکمت عملی کی وجہ سے محکمے کی کارکردگی میں اضافہ ہوا ہے۔ جبکہ معائنہ ٹیموں کی بروقت کارروائی اور دوروں کی وجہ سے اسکولوں کی کارکردگی کافی حد تک بہتر ہوئی ہے۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے ہنہ اوڑک کے مختلف اسکولوں کے اچانک دوروں کے موقع پر کیا جن میں گورنمنٹ پرائمری اسکول کلی ملک تاج محمد ہنہ،گورنمنٹ گرلزمڈل اسکول ہنہ،گورنمنٹ گرلز ہائی ا سکول ہنہ،گورنمنٹ بوائز ہائی اسکول ہنہ اور گورنمنٹ بوائز مڈل اسکول ہنہ کا دورہ کیا۔ اس دوران صوبائی مشیر نے گورنمنٹ بوائز ہائی ا سکول کے سائنس لیبارٹری کی عدم فعالی پر شدید برہمی کا اظہار کرتے ہوئے متعلقہ ہیڈ ماسٹر کو ایک ہفتے کے اندر فعالی کے احکامات جاری کرتے ہوئے رپورٹ جمع کرانے کی ہدایات دی۔ مشیر تعلیم نے کہا کہ سکولوں میں سائنس لیبارٹریوں کی بندش المیہ ہے۔ سائنس اور ٹیکنالوجی کے دور میںا سکولوں میں فعال سائنس لیب نہایت اہمیت کا حامل ہے ان کی بندش کی ہر گز اجازت نہیںہوگی۔ تمام کلسٹر ہیڈز سائنسی آلات کے لیے مختص رقوم کو درست انداز میں استعمال کو یقینی بنائیں۔ کسی بھی سکول میں غیر فعال سائنس لیب کا ذمہ دار متعلقہ ہیڈ ماسٹر صاحبان یا ڈی ڈی او صاحبان ہوں گے۔ غفلت کے مرتکب افراداور خلاف ورزی کرنے والوں کے خلاف سخت کاروائی عمل میں لائی جائے گی۔ صوبائی مشیر نے کہا کہ وہ خود معائنہ ٹیموں کی نگرانی کررہے ہیں۔ معائنے کے عمل سے اسکولوں کی حالت کافی بہتر ہوئی ہے۔
﴾﴿﴾﴿﴾﴿
خبر نامہ نمبر 2123/2019
کوئٹہ یکم جولائی ۔ترجمان بلوچستان حکومت لیاقت شاہوانی کا کہنا ہے کہ چیئرمین سینٹ میر صادق سنجرانی کو ہٹانے کا کوئی جواز ہی نہیں ہے جس غیر جانبدارانہ طریقے سے چیئرمین سینٹ نے اپنے عہدے کا پاس رکھا ہے اس کی مثال نہیں ملتی۔تاریخ میں پہلی بار بلوچستان کو یہ اعزاز حاصل ہوا کہ سینٹ کا چیئرمین بلوچستان کی سرزمین سے ہے اور اب صرف ایک سال بعد ہی ان کو ہٹانے کی باتیں گردش کرنے لگی ہیں جوکہ انتہائی افسوسناک ہے۔اگر چیئرمین سینٹ کو ہٹایا گیا تو اس عمل سے وفاق کی خدمت کی بجائے صوبے میں احساس محرومی بڑھے گی۔ترجمان نے اپنے ایک ٹیوٹر پیغام میں کہا ہے کہ یہ وقت بلوچستان کی اہمیت کو اجاگر کرنے کا ہے کیونکہ پوری دنیا کی نگاہیں بلوچستان پر ٹکی ہوئی ہیں بلوچستان کی جغرافیائی اہمیت انتہائی اہم ہے بلوچستان پاکستان کا مستقبل ہے اسی لیئے تمام سیاسی جماعتوں کو کوئی بھی فیصلہ کرنے سے پہلے بلوچستان کے بارے میں ضرور سوچنا چاہیے ۔
﴾﴿﴾﴿﴾﴿
خبر نامہ نمبر 2124/2019
کوئٹہ یکم جولائی۔صوبائی محتسب بلوچستان عبدالغنی کی ہدایت پر محکمہ زراعت خضدار میں اقلیتی کوٹے پر بیلدار تعینات ہونے والے سنیل کمار کی بندکی گئی تنخواہیں جاری کردی گئیں© ۔ تفصیلات کے مطابق سائل سنیل کمار نے صوبائی محتسب کو درخواست دی تھی کہ بند ے کو محکمہ زراعت خضدار میں اقلیتی کوٹے پر بیلدار تعینات کیا گیا اور بعد میں محکمہ کے افسران نے بتایا کہ پوسٹ ہی خالی نہیںہے لہٰذا ملازمت اور تنخواہ نہیں دی جاسکتی جس پر درخواست گزار نے تنخواہ کی ادائیگی کی اپیل صوبائی محتسب کو کی ۔ تفتیش کے دوران متعلقہ محکمے کے افسران کو طلب کیا گیا اور محکمہ سے تحریری جواب طلبی کی گی اور صوبائی محتسب کے سامنے پیش بھی کیا گیا جس پر صوبائی محتسب نے تنخواہوں کی ادائیگی کی ہدایت کی ۔ بعد ازاں سائل سنیل کمار نے تحریر ی طور پر آگاہ کیا کہ بندے کو بند تنخواہیں مل گئی ہیں اور صوبائی محتسب عبدالغنی خلجی اور تفتیشی آفیسر و عملے کا شکریہ ادا کیا۔
﴾﴿﴾﴿﴾﴿
خبر نامہ نمبر 2125/2019
کوئٹہ یکم جولائی ۔بلوچستان ریوینو اتھارٹی نے کوئٹہ الیکٹرک سپلائی کمپنی کے بینک اکاو¿نٹس منجمدکر کے 879 ملین ریکور کر لئے۔اس کے علاوہ سیندک میٹلز لمیٹڈ کے بینک اکاو¿نٹس سے 407 ملین ریکور کر کے صوبائی خزانے میں جمع کرادیے۔کمشنر بی آر اے نصیب اللہ عمرانی نے ایک بار پھر تمام ٹیکس نادہندگان کو خبردار کیا کہ صوبائی سیلز ٹیکس کی مد میں واجب الدا رقم جلدازجلد صوبائی خزانے میں جمع کرادیں۔کمشنر بی آر اے نے بتایا کہ بلوچستان ریوینو اتھارٹی جون کے مہینے میں 2500 ملین ریکور کر چکی ہے کمشنر بی آر اے نصیب اللہ عمرانی کا کہنا ہے کہ جولائی کے مہینے سے صوبائی سیلز ٹیکس کا دائرہ کار مزید بڑھایا جائے گا اور اس سلسلے میں پالیسی مرتب کر دی گئی ہے۔
﴾﴿﴾﴿﴾﴿
خبر نامہ نمبر 2126/2019
کوئٹہ یکم جولائی۔ سیکرٹری ریجنل ٹرانسپورٹ اتھارٹی کوئٹہ ڈویژن روحانہ گل کاکڑ نے کہا کہ تمام قانونی تقاضوں کو پورا کرنے کے بعد رکشوں کو ریپلس کیا جائے گا۔لہٰذا تمام رکشہ مالکان پالیسی کے مطابق قانونی کارروائی مکمل کرکے اپنا رکشہ ریپلس کرسکتے ہیں انہوں نے کہا کہ شہر میں دو نمبر اور جعلی رکشوں کی روک تھام کے سلسلے میں ٹریفک پولیس کے ہمراہ وقتاً فوقتاً ان کے خلاف کارروائی عمل میں لائی جارہی ہے۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے ٹریفک پولیس کی کمیٹی کی جانب سے ناکارہ اور خستہ حال رکشوں کو اسکریپ کرنے کے موقع پر رکشہ مالکان اور یونین کے عہدیداروں سے بات چیت کرتے ہوئے کیا۔اس موقع پر ایس پی ٹریفک سریاب سرکل سیف اللہ کھیتران،موٹروہیکل ایگزیمنر کوئٹہ کامران اللہ خان،ٹریفک انچارج ولی محمد،چیئرمین رکشہ یونین کوئٹہ حاجی عبد الباری کے علاوہ دیگر متعلقہ آفیسران اور یونین عہدیداران بھی موجود تھے۔سیکرٹری آر ٹی اے کوئٹہ نے کہا کہ کہ ریپلسمنٹ پالیسی پر عمل درآمد کرایا جارہا ہے جس کے مطابق تمام قانونی تقاضوں کو پورا کرکے رکشہ مالکان ٹریفک پولیس کی کمیٹی کے سامنے رکشہ پیش اور اسکریپ کرنے کے بعد مالکان کے حوالے کیا جائے گا تاکہ وہ اپنا رکشہ ریپلس کرکے نیا رکشہ چلائےں اس اقدام سے شہر میں جعلی اور دونمبررکشوں کے خاتمے میں مدد ملے گی اور حقیقی رکشہ مالکان کے حقوق کا تحفظ کیا جائے گاانہوں نے کہا کہ شہر میں رکشوں کی تعداد سے ٹریفک مسائل اور رش کی صورتحال درپیش ہے لہٰذاقانون کی پاسداری رکشہ مالکان پر لازم ہے اور جو مالکان اپنا رکشہ ریپلس کروانا چاہتے ہیں وہ تمام قانون کے مطابق درخواست دے سکتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ اس اقدام سے شہر سے پرانا اور خستہ حال رکشوں کا خاتمہ ہوگا جس سے شہر میں عوام کو سفری سہولت اور شہر کی خوبصورتی میں اضافہ ہوگا انہوں نے کہا کہ جن رکشہ مالکان کے رکشے پرانے اور خستہ حال ہے وہ اپنے رکشوں کی حالت زار جلد از جلد بہتر بنائے یا اسکریپ کرکے نیا رکشہ پر ریپلس کرے ورنہ ان کے خلاف کاروائی عمل میں لائی جائے گی۔
﴾﴿﴾﴿﴾﴿
خبر نامہ نمبر 2127/2019
کوئٹہ یکم جولائی۔ڈپٹی کمشنر کوئٹہ کے ایک اعلامیہ کے مطابق شکیل احمد ولد حاجی عبدالحمید لوکل سرٹیفکیٹ نمبر 18698-6/59/citz تاریخ اجراء25 نومبر 2004 انکی اپنی درخواست پر منسوخ کیا جاتا ہے۔
﴾﴿﴾﴿﴾﴿
خبر نامہ نمبر 2128/2019
کوہلویکم جولائی۔ ڈپٹی کمشنر کوہلو عبداللہ کھوسہ نے شہرمیں ہفتہ صفائی مہم کا باقاعدہ افتتاح کردیا۔ اس موقع پر ونگ کمانڈر ایف سی میوند رئفل کرنل محمد حماد ،چیف آفیسر میونسپل کمیٹی یوسف کھیتران ،رسالدار میجر شیر محمدمری،تحصیلدار علی مرتضٰی مری ،ڈی ای او محمدحفیظ ،ڈسٹرکٹ آفیسر ایجوکیشن جعفر زرکون ،مصری خان و دیگر موجود تھے ڈپٹی کمشنر عبداللہ کھوسہ اور ونگ کمانڈر ایف سی میوند رائفل کرنل محمد حماد نے فیتہ کاٹ کر اور جھاڑولگا کر شہر میں خصوصی ہفتہ برائے صفائی کے مہم کا افتتاح کیا اس موقع پر ڈپٹی کمشنر نے گفتگو کرتے ہوئے کہا ہے کہ شہر ہم سب کا مشترکہ گھر ہے جس طرح ہم اپنے گھر کو صاف رکھنا اور دیکھنا چاہتے ہیں اسی طر ح ہم سب نے مل کر اپنے پیارے شہر کو صاف کرنے کےلئے کردار ادا کرنا ہے ہمارا دین ہمیں ہر وقت صفائی کی تلقین کرتا ہے بعدازاں ڈپٹی کمشنر نے شہر کے مختلف علاقوں کا دورہ کرکے صفائی مہم کا جائزہ لیا اور میونسپل کمیٹی ودوکانداروں کو شہر میں صفائی کی خاص خیال رکھنے کی ہدایت کی ہے ۔
﴾﴿﴾﴿﴾﴿
پریس ریلیز
کوئٹہ یکم جولائی۔ ایم آر ڈی ایل کے زیر اہتمام مائنز اینڈ منرل ڈیو یلپمنٹ کے مائن انجینئرز اور جیا لوجسٹ کی فنی تربیت کیلئے پندرہ روزہ ٹریننگ ورکشاپ کا انعقاد ہوا۔ٹریننگ پروگرام کی افتتاحی تقریب کے مہمان خصوصی ڈاکٹر تنویر احمد قریشی ایڈیشنل سیکریٹری پیٹرولیم ڈویژن پاکستان تھے۔ تقریب میں سیکریٹری معدنیات زاہد سلیم اعوان ، سیکریٹری نور الحق بلوچ ، سیکریٹری لائیو اسٹاک دوستین جمالدینی، سیکریٹری آئی ٹی ، منیجنگ ڈائریکٹر سیندک میٹلز لمیٹڈ ( ایم آر ڈی ایل ) ، ایم ایچ ڈی دو در لیڈزنک پراجیکٹ کے سینئر آفیسران ، چائنہ جیو لوجیکل سروے کی ٹیکنیکل ٹیم کے ممبران بھی شریک تھے۔ پندرہ روزہ ٹریننگ ورکشاپ میں پاکستان اور چائنہ کے ماہرین کی خدمات حاصل کی ہیں جو اپنے تجربات اور مشاہدات سے مائنز ڈیپارٹمنٹ کے زیر تربیت آفیسران کے ساتھ ان کا تبادلہ کریں گے۔اس تربیتی پروگرام کیلئے تمام وسائل ایم آر ڈی ایل مہیا کررہی ہے ۔ تربیتی پروگرام یکم جولائی سے پندرہ جولائی تک جاری رہے گا۔
﴾﴿﴾﴿﴾﴿

Share With:
Rate This Article

bk@gmail.com

No Comments

Leave A Comment