وزیر اعلیٰ بلوچستان کے مشیر برائے ثانوی تعلیم حاجی محمد خان لہڑی کا صوبائی دارالحکومت کوئٹہ اور مستونگ کے مختلف سکولوں کا اچانک دورہ۔ غیرحاضری اور فرائضِ میں غفلت پر23 اساتذہ کے خلاف کارروائی کے احکامات جاری۔ ہیڈماسٹر کی کارکردگی پر عدم اطمینان کا اظہار۔ سکولوں میں تعمیر و مرمت اور صفائی کی ناگفتہ بہ صورتِ حال پر برہم۔ غیر حاضر اساتذہ کو اظہار وجوہ کے نوٹس جاری کرنے کے احکامات جاری۔ ان میں گورنمنٹ بوائز ہائی سکول کیچی بیگ،گورنمنٹ گرلز ہائی سکول کیچی بیگ کوئٹہ،گورنمنٹ گرلز ہائی سکول لوہڑ کاریزکوئٹہ،گورنمنٹ گرلز ہائیر سیکنڈری سکول ایری گیشن کالونی کوئٹہ،گورنمنٹ بوائز ہائی سکول درینگڑھ مستونگ،گورنمنٹ بوائز مڈل سکول جدید آباد مستونگ شامل ہیں۔ ڈائریکٹر اسکولز اعجاز احمد بلوچ اور ڈسٹرکٹ ایجوکیشن آفیسر کوئٹہ شبیراحمد لانگو بھی صوبائی مشیر تعلیم کے ہمراہ تھے- مختلف اسکولوں کے دورہ کے موقع پر حاجی محمد خان لہڑی نے سخت تنبیہ کرتے ہوئے کہا کہ تعلیمی اداروں کے سربراہان کی کارکردگی میں غفلت برداشت نہیں کی جائے گی۔ تمام سکولوں کے پرنسپل، ہیڈ ماسٹراور ہیڈ مسٹریس مثر کارکردگی کو اپنا شعار بنائیں۔ غفلت کے مرتکب سربراہان کے خلاف سخت محکمانہ کارروائی عمل میں لائی جائے گی۔ صوبائی مشیر نے بعض سکولوں میں تعمیر و مرمت اور صفائی کی صورت حال پر شدید برہمی کا اظہار کرتے ہوئے سربراہان کو صفائی کی صورتحال بہتر بنانے کی تاکید کی۔ صوبائی مشیر نے سکولوں کے سربراہان کو کلسٹر بجٹ کے درست استعمال کی ہدایت کرتے ہوئے فوری رپورٹ پیش کرنے کے ہدایات بھی جاری کیں محمد خان لہڑی نے کہا کہ غیرحاضری کسی صورت برداشت نہیں کی جائے گی۔ محکمے میں غیر حاضر اور غافل لوگوں کیلیے کوئی جگہ نہیں۔ حکومت محکمے کی بہتری کیلیے تمام دستیاب وسائل بروئے کار لائے گی۔ بلوچستان کے تمام سرکاری سکولوں کو مثالی تعلیمی ادارے بنانے کے عزم کے ساتھ دن رات کوشاں ہیں۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

Post comment